سرورق / بین اقوامی / ہمیں ‘سرد جنگ’ سے بچنا ہو گا: جرمنی

ہمیں ‘سرد جنگ’ سے بچنا ہو گا: جرمنی

برلن، جرمنی نے کہا ہے کہ وہ ‘سرد جنگ’ سے بچنا چاہتا ہے اور جاسوسی اسکنڈل میں امریکہ اور مغربی ممالک کے ساتھ کھڑا ہونے کے باوجود روس کے ساتھ بات چیت کو جاری رکھنے کا خواہاں ہے۔
جرمن حکومت میں روس کے لئے کنوینر گارنوٹ ایرلر نے ایک اخبار کو دیئے انٹرویو میں یہ بات کہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جرمنی سے روس کے چار سفارت کاروں کو واپس بھیجنے کا فیصلہ انگلینڈ میں روس کے سابق جاسوس سرگئی اسكرپل کے قتل کی کوشش کے بعد برطانیہ کے ساتھ یکجہتی کا اشارہ تھا۔ جاسوس کے قتل کی کوشش کے معاملے میں جرمنی اپنے موقف پر قائم رہنے کے باوجود اس نے بات چیت کے تمام راستے کھلے رکھے ہیں۔
مسٹر ایرلر نے کہا’’ہم اپنے موقف پر قائم ہیں ،ہم روس کے ساتھ بات چیت جاری رکھنا چاہتے ہیں۔ ہم نئی ’سرد جنگ‘ سے بچنے کے لئے ہر ممکن کوشش کریں گے‘‘۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: