سرورق / بین اقوامی / کیمیائی حملے والی جگہ پر ثبوتوں سے چھیڑ چھاڑ نہیں ہوئی: روس

کیمیائی حملے والی جگہ پر ثبوتوں سے چھیڑ چھاڑ نہیں ہوئی: روس

لندن، روس نے شام میں مشتبہ کیمیائی حملے والی جگہ پر ثبوتوں کے ساتھ کسی طرح کی چھیڑ چھاڑ کرنے کے الزام سے انکار کیا ہے۔ بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق روس کے وزیر خارجہ سرگئی لاوروف نے ایک انٹرویو میں کہاکہ میں دعوے کے ساتھ کہہ سکتا ہوں کہ روس نے اس جگہ پر کوئی چھیڑ چھاڑ نہیں کی ہے۔
برطانیہ اور امریکہ کا الزام ہے کہ روس داوما میں مشتبہ کیمیائی حملہ کے ثبوت مٹانے کے لئے شامی حکومت کی مدد کررہا ہے۔ بین الاقوامی تفتیش کار داوما قبصہ تک نہیں پہنچ سکے ہیں۔ امریکہ نے کیمیائی ہتھیاروں کی نگرانی کرنے والے بین الاقوامی گروپ کو ہوشیار کیا تھا کہ مشتبہ کیمیائی حملے والی جگہ پر روس ثبوتوں کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرسکتا ہے۔ آرگنائزیشن فار پروہی بیشن آف کیمکل ویپنس (او پی سی ڈبلیو) پوری دنیا میں کیمیائی ہتھیاروں کو تباہ کرنے اور انکی روک تھام کے لئے کام کررہی ہے۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: