سرورق / کھیل / کوارٹر فائنل کی راہ میں آج ہند کو اٹلی کا چیلنج بے حد اہم مقابلہ۔ ہر حال میں جیت کر عالمی کپ آخری8؍ میں جائیں گے۔ رانی

کوارٹر فائنل کی راہ میں آج ہند کو اٹلی کا چیلنج بے حد اہم مقابلہ۔ ہر حال میں جیت کر عالمی کپ آخری8؍ میں جائیں گے۔ رانی

لندن،  (یو این آئی) ہندوستانی خاتون ہاکی ٹیم نے اتار چڑھاو کے دور سے گزرتے ہوئے خواتین ہاکی عالمی کپ ٹورنمنٹ کے کوارٹر فائنل میں پہنچنے کی اپنی توقعات کو برقرار رکھا ہے اور آخری8 میں جانے کے لئے اس منگل کو اٹلی کے چیلنج سے گزرنا ہو گا ۔ہندوستان پول بی میں آئر لینڈ (6) اور اولمپک چیمپئن انگلینڈ (5) کے بعد 2 پوائنٹس کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہا۔ٹورنمنٹ میں ہر پول کی سب سے اوپر کی ٹیم کو براہ راست کوارٹر فائنل میں داخلہ ملا ہے جبکہ پول بی دوسرے اور تیسرے نمبر کی ٹیم کو دوسرے پول کے دوسرے اور تیسرے نمبر کی ٹیموں کو کراس میچ کھیلنا ہے ۔ان کراس میچوں میں فاتح ٹیم کو پھر کوارٹر فائنل میں پہلے سے موجود ٹیموں سے کھیلنے کا حق ملے گا۔ہندوستان نے جہاں اپنے پول میں3 میچوں میں 2 ڈرا کھیلے ہیں اور ایک ہارا ہے جبکہ اٹلی نے 3 میچوں میں 2 جیتے اور ایک میں اسے شکست ملی ہے ۔اٹلی کے اس ریکارڈ کو دیکھتے ہوئے ہندوستان کے لئے کوارٹر فائنل کی راہ قطعی آسان نہیں ہے ۔ ہندوستانی ٹیم گول کرنے کے معاملے میں اتنی قابل نہیں دکھائی دے رہی ہے جتنا اس عالمی کپ میں ہونا چاہیئے۔اس نے انگلینڈ سے پہلا میچ 1۔1سے ڈرا کیا، دوسرے میچ میں آئر لینڈ سے 0-1کی شکست کھائی اور پھر تیسرے میچ میں امریکہ سے 1۔1کا ڈرا کھیلا۔یعنی 3 میچوں میں اب تک ہندوستانی ٹیم صرف 2 گول کر پائی ہے ۔دوسری طرف اٹلی نے چین کو 3-0اور کوریا کو 1-0سے شکست دی ہے جبکہ ہالینڈ سے اسے 1-2کی شکست کھانی پڑی۔ہندوستانی ٹیم اٹلی کے ہالینڈ کے خلاف کارکردگی سے حوصلہ لے سکتی ہے کہ وہ اس ٹیم کو شکست دینے میں کامیاب ہو گی۔لیکن اس کے لئے کپتان رانی رامپال سمیت ٹیم کے تمام کھلاڑیوں کو گول کرنے پر اپنی توجہ مرکوز کرنی ہوگی ۔رانی نے ہی امریکہ کے خلاف 31ویں منٹ میں برابری کا گول داغا تھا۔رانی نے اٹلی کے خلاف میچ کے موقع پر کہا،’’ ہمیں اپنے کھیل پر توجہ مرکوز کرنی ہوگی۔ ہمیں اپنی طاقت کے مطابق مظاہرہ کرنا ہوگا اور یہ دیکھنا ہوگا کہ ہم اپنے مثبت پہلوؤں کا مکمل طورپر استعمال کر سکیں۔یہ ہمارے لئے فیصلہ کن مقابلہ ہے اور ہم جیت کر ہی کوارٹر فائنل میں پہنچ سکتے ہیں۔‘‘امریکہ کے خلاف اتوار کو کھیلے گئے آخری گروپ میچ میں ٹیم کی کارکردگی پر رانی نے کہا،’’ جب ہماری ٹیم میٹنگ ہوئی تھی تو ہم نے غور کیا تھا کہ یہ کس طرح ہمارے لئے کرو یا مرو کا مقابلہ ہے ۔ہم جانتے تھے کہ ہمارے لئے ڈرا کافی ہوگا لیکن ہم جیت کے ارادے سے اترے تھے اور اسی فتح کی بھوک سے ہمیں امریکہ کے خلاف مدد ملی۔مجھے فخر ہے کہ ہماری ٹیم امریکہ کے خلاف اچھا کھیلی اور اب ہمیں اٹلی کے خلاف ایسی ہی کارکردگی کی ضرورت ہے ۔ ہماری ٹیم، اٹلی کو پوری سنجیدگی کے ساتھ لے گی اور 2015ء ہاکی عالمی لیگ سیمی فائنل ٹورنمنٹ میں اٹلی کے خلاف شوٹ آؤٹ میں ملی جیت سے تحریک لے گی۔اٹلی ایک اچھی ٹیم ہے اور ٹورنمنٹ میں اس کی اب تک کارکردگی اچھی رہی ہے۔ لیکن مجھے یقین ہے کہ ہم اس ٹیم کو ہرا سکتے ہیں۔‘‘ہندوستان اور اٹلی کا منگل کو مقابلہ ہندوستانی وقت کے مطابق رات ساڑھے 10 بجے ہو گا۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

ٹیسٹ جنگ میں نہیں نظر آئے گی آئی پی ایل دوستی: بٹلر

لندن، انگلینڈ کے تجربہ کار بلے باز جوز بٹلر نے ہندوستانی ٹیم کو آگاہ کیا …

جواب دیں

%d bloggers like this: