سرورق / بین اقوامی / کم نے سے فوج کے افسر پر سرعام 90 گولیاں چلوائیں –

کم نے سے فوج کے افسر پر سرعام 90 گولیاں چلوائیں –

سیول، شمالی کوریا کے رہنما کم جونگ نے اپنے ایک ٹاپ فوجی افسر کو سرعام 90 گولیوں سے چھلنی کرواکر موت کے گھاٹ اتار دیا۔ مسٹر کم نے اس کی ذمہ نو افراد کو تفویض کیا، جنہیں موت کی سزا سنائی گئی تھی۔ لیفٹیننٹ جنرل هيونگ جو سونگ پر جوانوں کو مقررہ حد سے زیادہ کھانا اور ایندھن دینے کے الزام لگے تھے۔گزشتہ دنوں انہیں اختیارات کا غلط استعمال کرنے اور غداری کا مجرم ٹھہرایا گیا تھا۔ اس سے پہلے بھی کم ان میٹنگ میں جھپکی لینے پر اپنے دفاعی سربراہ هيونگ یونگ کو مروا چکا ہے۔
’دی سن‘ اخبار کی رپورٹ کے مطابق، فوجی افسر هيونگ کو دارالحکومت پيونگ يونگ میں واقع ملٹری اکیڈمی میں سزائے موت دی گئی۔ هيونگ نے 10 اپریل کو ایک سیٹلائٹ لانچنگ اسٹیشن کا معائنہ کیا تھا جہاں جوانوں نے ان سے کہا تھا کہ اب جوہری ہتھیار اور راکٹ بنانے کے لئے ہم اور بھوکے نہیں رہ سکتے۔ تب فوج کے اس افسر نے جوانوں کے خاندانوں کے لئے زیادہ چاول اور ایندھن دینے کی ہدایات دیئے تھے۔ اس کے بعد شمالی کوریا ئی لیڈر کو هيونگ کی یہ بات ناگوار گزری جس کے بعد مسٹر کم کے حکم پر هيونگ کو سزا دی گئی۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: