سرورق / خبریں / کسان آندولن : 10 دنوں کی ہڑتال پر 8 ریاستوں کے کسان ، دودھ اور سبزیوں کی سپلائی پر اثر –

کسان آندولن : 10 دنوں کی ہڑتال پر 8 ریاستوں کے کسان ، دودھ اور سبزیوں کی سپلائی پر اثر –

نئی دہلی : آٹھ ریاستوں کی کسان یونینوں نے جمعرات کو 10 دنوں کی بڑی ہڑتال کا اعلان کیا ہے۔ ہڑتال کے تحت دودھ اور سبزیوں کی سپلائی بند کردی گئی ہے۔ کسان یونین نے اس ہڑتال کی مدھیہ پردیش کے مندسور کسان آندولن کے ایک سال پورے ہونے پر کال دی ہے ۔ گزشتہ سال مندسور میں پولیس کی گولی باری میں چھ کسانوں کی موت ہوگئی تھی ۔ ہڑتال کا اثر مدھیہ پردیش ، مہاراشٹر ، پنجاب ، راجستھان ، اترپردیش ، کرناٹک ، ہریانہ اور چھتیس گڑھ میں بھی دیکھا جاسکتا ہے۔
کسانوں سے بات چیت میں پتہ چلا ہے کہ اس مرتبہ کسان ہڑتال کے نام پر سڑکوں پر نہیں اتریں گے بلکہ وہ بازاروں میں دودھ اور سبزیوں کی سپلائی روک دیں گے ۔ کسانوں کے مطابق شہر کے لوگ چاہیں تو براہ راست گاوں سے اپنی ضرورت کا سامان خرید سکتے ہیں۔
کسانوں کے اہم مطالبات میں قرض معافی ، کم سے کم امدادی قیمت میں اضافہ اور اپنی فصلوں کا زیادہ دام شام ہے۔ 11 مئی کو بھوپال کے گاندھی آشرم وردھا میں کسانوں کی تقریبا 100 تنظیموں نے ملاقات کی تھی ۔ یہ میٹنگ راشٹریہ کسان مہاسنگھ نے منعقد کی تھی ۔ اس میٹنگ کے دوران 10 دنوں کے آندولن پر تبادلہ خیال کیا گیا تھا۔
مہاراشٹر کے کسان آندولن میں شریک ہونے والی سوابھیمان سنگٹھن اور آر ایس ایس کی بھارتیہ کسان سنگھ نے اس 10 دن کے آندولن میں شرکت نہیں کی ہے۔ مقامی کسان لیڈر انل یادو کے مطابق پولیس نے کسانوں سے 24000 روپے کے بانڈ پر دستخط کروایا ہے تاکہ وہ پرتشدد نہ ہوں۔ پولیس کو بھی آنسو گیس کے گولے چھوڑنے کی تربیت دی گئی ۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: