سرورق / کھیل / کرکٹ: راؤنڈ رابن فارمیٹ میں ہوگا آئی سی سی ورلڈ کپ 2019 –

کرکٹ: راؤنڈ رابن فارمیٹ میں ہوگا آئی سی سی ورلڈ کپ 2019 –

کولکتہ، سال 1992 کا ون ڈے ورلڈ کپ راؤنڈ رابن فارمیٹ میں کھیلا گیا تھا اور اس کے 27 سال کے بعد جا کر 2019 میں انگلینڈ میں ہونے والا ورلڈ کپ راؤنڈ رابن فارمیٹ میں کھیلا جائے گا۔سال 1992 میں جہاں نو ٹیمیں تھیں وہیں اس بار 10 ٹیمیں راؤنڈ رابن کی شکل میں ایک دوسرے کے خلاف کھیلیں گی۔ بین الاقوامی کرکٹ کونسل (آئی سی سی) نے سات دن تک جاری رہی بورڈ میٹنگ کے بعد عالمی کپ 2019 کے پروگرام کی تصدیق کی ہے جو انگلینڈ اینڈ ویلز کی میزبانی میں 30 مئی سے 14 جولائی تک کھیلا جائے گا۔
سال 1975 میں شروع ہوئے عالمی کپ کے پہلے چار ورژن گروپ میچوں کے بعد سیمی فائنل اور فائنل کی شکل میں کھیلے گئے تھے۔1992 میں راؤنڈ رابن شکل کی شروعات ہوئی جس میں تمام نو ٹیمیں ایک دوسرے کے خلاف کھیلیں اور سرفہرست چار ٹیموں کے درمیان سیمی فائنل ہوئے۔لیکن اس کے بعد اس شکل کا استعمال نہیں ہوا۔سال 1996 کے عالمی کپ میں کوارٹر فائنل کا آغاز ہوا جبکہ 1999 کے ورلڈ کپ میں سپر سکس کی شروعات ہوئی۔
آئی سی سی ورلڈ کپ 27 سال بعد اسی راؤنڈ رابن فارمیٹ میں لوٹ رہا ہے جس میں پاکستان کی ٹیم کرشمائی واپسی کرتے ہوئے چمپئن بنی۔اس بار تمام 10 ٹیمیں لیگ مرحلے میں ایک دوسرے سے کھیلیں گی اور چار ٹیمیں ناک آؤٹ راؤنڈ میں داخلہ حاصل کر یں گی۔
سال 1983 اور 2011 کے عالمی چمپئن اور 2013 میں انگلینڈ میں آئی سی سی چمپئنز ٹرافي جیت چکی ہندستانی کرکٹ ٹیم اس بار مہم کا آغاز پانچ جون کو ساؤتھمپٹن کے ہیمپشائر میں جنوبی افریقہ کے خلاف کرے گی جبکہ روایتی حریف پاکستان سے اس کا میچ 16 جون کو اولڈ ٹریفرڈ میں ہو گا۔
میزبان انگلینڈ 30 مئی کو اوول میں جنوبی افریقہ کے خلاف میچ سے ورلڈ کپ کا آغاز کرے گا جو انگلینڈ اور ویلز میں 11 مقامات پر کھیلا جائے گا۔کرکٹ کا مرکز کہا جانے والا لارڈس 14 جولائی کو پانچویں بار عالمی کپ فائنل کی میزبانی کرے گا۔
آئی سی سی نے ناک آؤٹ میچ دونوں سیمی فائنل اور فائنل کیلئے ریزرو دن رکھے ہیں۔ اولڈ ٹریفرڈ نو جولائی کو پہلے سیمی فائنل کی میزبانی کرے گا جس میں پہلے اور چوتھے نمبر کی ٹیمیں نبرد آزما ہوں گي۔11 جولائی کو ایجبسٹن میں دوسرے اور تیسرے مقام کی ٹیموں کے درمیان دوسرا سیمی فائنل ہو گا ۔
عالمی کپ کے میچوں کی میزبانی کرنے والے 11 مقامات میں لارڈس، اوول، ایجبسٹن، ٹرینٹ برج، هیڈنگلے، اولڈ ٹریفرڈ، ٹائٹن، برسٹل، چیسٹرلي اسٹریٹ، ساؤتھمپٹن اور کارڈف شامل ہیں۔46 دنوں تک چلنے والے اس ٹورنامنٹ میں 45 میچوں کے بعد سنگل لیگ کی شکل کی بنیاد پر سرفہرست چار ٹیمیں سیمی فائنل میں پهنچیں گي۔گزشتہ چمپئن آسٹریلیا کا پہلا مقابلہ ابھی کوالیفائنگ افغانستان سے دو جون کو برسٹل میں ہوگا۔ٹورنامنٹ میں سات دن رات کے میچ کھیلے جائیں گے۔ آئی سی سی کرکٹ عالمی کپ 2019 کے منیجنگ ڈائریکٹر اسٹیو ایلسورتھي نے پروگرام کا اعلان کرتے ہوئے ٹکٹوں کی قیمت پر بھی توجہ دینے کی بات کہی۔انہوں نے کہا کہ برطانیہ کی آبادی بہت الگ ہے اور ہر ٹیم کو اس کی گھریلو حمایت یہاں ملے گی ۔ یہ دنیا میں تیسرا سب سے زیادہ دیکھا جانے والا ٹورنامنٹ ہے اس لئے ہم نے ٹکٹوں کی قیمت کو بھی اسی حساب سے طے کیا ہے۔ہم نے گزشتہ چھ ماہ میں بہت سے شائقین پر ان قیمتوں کا ٹیسٹ کیا ہے اور اس پر کافی بحث بھی کی ہے۔
آئی سی سی ورلڈ کپ میں ہندستان کے میچوں کا پروگرام اس طرح ہے:
پہلا میچ۔05 جون۔ہندستان بمقابلہ جنوبی افریقہ (ہیمپشائر باؤل، ساؤتھمپٹن)
دوسرا میچ ۔09 جون۔ہندستان بمقابلہ آسٹریلیا (دی اوول، لندن)
تیسرا میچ ۔13 جون۔ہندستان بمقابلہ نیوزی لینڈ (ٹرینٹ برج، نوٹنگھم)
چوتھا میچ ۔16 جون۔ہندستان بمقابلہ پاکستان (اولڈ ٹریفرڈ، مانچسٹر)
پانچواں میچ ۔22 جون۔ہندستان بمقابلہ افغانستان (ہیمپشائر باؤل ، ساؤتھمپٹن)
چھٹا میچ۔27 جون۔ہندستان بمقابلہ ویسٹ انڈیز (اولڈ ٹڑیفرڈ، مانچسٹر)
ساتواں میچ ۔30 جون ۔ہندستان بمقابلہ انگلینڈ (ایجبسٹن، برمنگھم)
آٹھواں میچ۔02 جولائي۔ہندستان بمقابلہ بنگلہ دیش (ایجبسٹن، برمنگھم)
نوا ںمیچ ۔06 جولائی ۔ہندستان بمقابلہ سری لنکا (هیڈنگلے، لیڈز)

Leave a comment

About saheem

Check Also

وزیر کھیل راٹھور سے ملے لکشے سین –

نئی دہلی، جونیئر ایشیائی بیڈمنٹن چمپئن شپ میں 53 سال کے طویل وقفے کے بعد …

جواب دیں

%d bloggers like this: