سرورق / کھیل / کرناٹک وجئے ہزارے ٹرافی کرکٹ ٹورٹمنٹ کے فائنل میں گوتم اور اگروال کے شاندار مظاہرے سے مہاراشٹرا کو 9؍وکٹ سے شکست-

کرناٹک وجئے ہزارے ٹرافی کرکٹ ٹورٹمنٹ کے فائنل میں گوتم اور اگروال کے شاندار مظاہرے سے مہاراشٹرا کو 9؍وکٹ سے شکست-

نئی دہلی 25 فروری (یو این آئی) آف اسپنر کرشپا گوتم (26رن پر تین وکٹ) کے بعد مینک اگروال (81) اور کپتان کر ونا نائر (ناٹ آؤٹ 70) کے درمیان پہلے وکٹ کے لئے ہوئی 155 رن کی سنچری شراکت کی بدولت کرناٹک نے ہفتہ کو مہاراشٹر کو 117 گیند باقی رہتے نو وکٹ سے شکست دے کر وجے ہزارے ٹرافی کرکٹ ٹورنمنٹ کے فائنل میں داخلہ حاصل کر لیا۔یہاں کھیلے گئے ٹورنمنٹ کے پہلے سیمی فائنل میں مہاراشٹر نے ٹاس جیت کر پہلے بلے بازی کرنے کا فیصلہ کیا اور اس کی پوری ٹیم 44.3 اوور میں 160 رن پر ڈھیر ہو گئی۔کرناٹک نے 30.3 اوور میں ایک وکٹ پر 164 رن بنا کر میچ جیت لیا اور خطابی مقابلے میں قدم رکھ دیا۔مینک نے 86 گیندوں پر آٹھ چوکوں اور ایک چھکے کے دم پر شاندار 81 رن بنائے ۔مینک کے ٹورنمنٹ میں اب 633 رن ہو گئے ہیں اور وہ کسی قومی گھریلو ٹورنمنٹ میں سب سے زیادہ رن بنانے والے پہلے بلے باز بن گئے ہیں۔مینک کے علاوہ کپتان نائر نے 90 گیندوں پر 10 چوکوں کی بدولت ناقابل شکست 70 رن بنائے ۔روی کمار سمرتھ نے ناٹ آؤٹ تین رن بنائے ۔اس سے پہلے مہاراشٹر نے پہلے بلے بازی کرتے ہوئے 160 رن کا معمولی اسکور بنایا۔سری کانت نے 77 گیندوں پر پانچ چوکوں کی مدد سے سب سے زیادہ 50 رن بنائے ۔نوشاد شیخ نے 58 گیندوں پر چار چوکوں کی بدولت 42 اور کپتان راہل ترپاٹھی نے 27 گیندوں پر دو چوکوں اور ایک چھکے کے سہارے 16 رن کاا اہم کردار ادا کیا۔کرناٹک کے لئے گوتم نے 26 رن پر تین وکٹ نکالے ۔ایم پرسدھ کرشنا نے 26 رن پر دو وکٹ جبکہ رونت مورے ، ٹی پردیپ اور شریس گوپال کو ایک ایک وکٹ ملے ۔فیروز شاہ کوٹلہ میدان دہلی میں بروز ہفتہ چلے پہلے سیمی فائنل میں شاندار مظاہرہ کرتے ہوئے کرناٹک نے مہاراشٹرا کو شکست دے دی۔ 161 رن کا تعاقب میں اتری کرناٹک نے صرف ایک وکٹ کے نقصان 30.3اوور میں 164 بناتے ہوئے فائنل ہیں داخلہ حاصل کرلیا۔ 27؍فروری بروز منگل وجئے ہزارے ٹرافی کرکٹ ٹورنمنٹ کا فائنل میچ ہے۔ 25؍فروری بروز اتوار آندھرا پردیش اور سوراشٹر کے درمیان دوسرا سیمی فائنل میچ پر فاتح ٹیم فائنل میں کرناٹک کے مدمقابل ہوگی۔ دودن قبل بیٹی کے باپ بننے والے سوراشٹر کے بلے باز چتیشور پوجارا آندھرا کے خلاف میچ کو سنجیدگی سے لیا ہے۔ پوجارا کو اعتماد ہے کہ ان کی ٹیم فائنل میں رسائی حاصل کرجائے گی۔ پہلے سیمی فائنل میں عمدہ فارم میں چل رہے مینک اگروال ایک مرتبہ پھر عمدہ بلے بازی کرتے ہوئے تمام کی توجہ اپنی جانب مبذول کی۔ گزشتہ دو مقابلوں میں ناکام رہے کرون نائر نے بھی لے میں دکھائی دئے۔ 28.2اوور میں کرناٹک نے 155؍رن بنائے تھے۔ جیت کے لئے صرف 6؍رن کی ضرورت تھی لیکن اس وقت حریف ٹیم کے گیند باز نے مینک اگروال کی وکٹ چٹخانے میں کامیابی حاصل کرلی۔ اس کے بعد آر سمرتھ (3) اور کرون نائر نے ٹیم کی جیت کو یقینی بنادیا۔


Leave a comment

About saheem

Check Also

وزیر کھیل راٹھور سے ملے لکشے سین –

نئی دہلی، جونیئر ایشیائی بیڈمنٹن چمپئن شپ میں 53 سال کے طویل وقفے کے بعد …

جواب دیں

%d bloggers like this: