سرورق / خبریں / کانگریس بتائے کہ سرجیکل اسٹرائیک صحیح یا غلط: بی جے پی

کانگریس بتائے کہ سرجیکل اسٹرائیک صحیح یا غلط: بی جے پی

نئی دہلی، بھارتیہ جنتا پارٹی نے پاکستان کے قبضہ والے کشمیر میں دہشت گردوں کے اڈوں پر ہندوستانی آرمی کی سرجیکل اسٹرائیک کے سلسلے میں کانگریس کے دلائل کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ دن دور نہیں جب کانگریس کے بیانات سے لشکر طیبہ جیسی دہشت گرد تنظیموں کو مدد ملے گی۔
بی جے پی کے سینئر لیڈر او روزیر قانون روی شنکر پرساد نے آج یہاں پریس کانفرنس میں کہا کہ کانگریس نے جس طرح کے الزامات سرجیکل اسٹرائیک کے بارے میں لگائے ہیں اس سے ایک بار پھر ثابت ہوگیا ہے کہ وہ مین اسٹریم کی پارٹی نہیں رہ گئی ہے اور تیزی سے حاشیے کی معمولی پارٹی بنتی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایسا نہیں لگتا ہیکہ کانگریس وہی پارٹی ہے جس نے ملک پر 58 سال تک حکومت کی۔
مسٹر پرساد نے کہا کہ کانگریس صدر راہل گاندھی سرجیکل اسٹرائیک کو خون کی دلالی کہہ چکے ہیں اور ان کی ماں نے بھی کسی وقت موت کے سوداگر جیسے لفظ کا استعمال کیا تھا۔ ایسے الفاظ کا استعمال کرنے والے لیڈروں کی پارٹی سے سرجیکل اسٹرائیک کے بارے میں کوئی اچھی امید نہیں کی جاسکتی ہے۔ کانگریس رہنما بار بار جموں و کشمیر کے بارے میں راجیہ سبھا میں اپوزیشن لیڈر اور ریاست کے سابق وزیر اعلی غلام نبی آزاد کے فوج کے متعلق بیان سے لشکر طیبہ کو سرٹیفکٹ مل گیا ہیاور اب وہ خاموش ہیں لیک سیف الدین سوز مسلسل بول رہے ہیں۔
انہوں نے کہا کہ سرجیکل اسٹرائیک کے بعد اترپردیش، ہماچل پردیش، گجرات، اتراکھنڈ ، کرناٹک اور شمال مشرق کے ریاستوں میں الیکشن ہوئے ہیں لیکن کسی الیکشن میں بی جے پی نے فوج کی اس کارروائی کے ویڈیو یا تصویروں کا سیاسی اورانتخابی استعمال نہیں کیا ہے۔ اس ویڈیو کو فوج کے افسران نے جاری کیا تھا اور بیان بھی دیا تھا کہ انہوں نے اس کارروائی کی لائیو اسٹریمنگ کی تھی۔ اس کے باوجود بھی کانگریس کے لیڈروں کے جو بیانات ہیں وہ پاکستان میں موجود دہشت گردوں اور ان کے آقاوں کو کافی پسند آتے ہیں۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

بی ایس این ایل صارفین کو بہتر خدمت فراہم کرے۔ منی اپا

کولار۔ ٹیلی کمیونکیشن ، کولار ضلع صلاح بورڈ کے صدر ورکن پارلیمان کے ایچ منی …

جواب دیں

%d bloggers like this: