سرورق / خبریں / چار لوک سبھا اور دس اسمبلی نشستوں پر پولنگ جاری

چار لوک سبھا اور دس اسمبلی نشستوں پر پولنگ جاری

نئی دہلی، اترپردیش، مہاراشٹر اور ناگالینڈ میں لوک سبھا کی چار اور دیگر ریاستوں میں اسمبلی کی دس نشستوں پر ضمنی انتخابات کے لئے سخت سیکورٹی کے درمیان آج پولنگ جاری ہے۔ سیاسی طور پر اہم اتر پردیش کی کیرانہ لوک سبھا سیٹ کے علاوہ مہاراشٹر کے بھنڈارا-گوديا اور پالگھر پارلیمانی سیٹوں اور ناگالینڈ کی ایک لوک سبھا سیٹ پر ووٹ ڈالے جا رہے ہیں۔ وہیں دس اسمبلی سیٹوں میں پولس كاندےگاؤں (مہاراشٹر)، نورپور (اتر پردیش)، جوكي هاٹ (بہار)، گوميا اور سلی (جھارکھنڈ)، چےگانور (کیرالہ)، انپاتي (میگھالیہ)، شاهكوٹ (پنجاب)، تھرالي (اتراکھنڈ) اور مهیشتلا (مغربی بنگال) میں بھی ضمنی انتخاب کے لئے ووٹ ڈالے جارہے ہیں ۔ کیرانہ لوک سبھا سیٹ پر 11 بجے تک 21.34 فیصد پولنگ ہوئی جبکہ نورپور میں 22 فیصد پولنگ ہوئی۔
سماج وادی پارٹی (ایس پی) نے الیکشن کمیشن سے کیرانہ لوک سبھا اور نورپور اسمبلی میں ہونے والی ووٹنگ میں رکاوٹ کی شکایت کی ہے۔ ایس پی کے ترجمان راجندر چودھری نے دعوی کیا ہے کہ دونوں علاقوں میں بہت سے بوتھوں پر ووٹنگ میں دو گھنٹے سے زیادہ وقت تک خلل رہا۔ انہوں نے کہا کہ نورپور کی رپورٹ کے مطابق 140 سے زیادہ ای وی ایم مشینیں خراب تھی۔ ان کے مطابق ای وی ایم کے ساتھ چھیڑ کیا گیا ہے، لہذا مشینیں خراب ہیں۔
پنجاب میں جالندھر کے شاه كوٹ اسمبلی ضمنی انتخاب میں صبح 11 بجے تک کل 20 فیصد ووٹنگ درج کی گئی ہے۔ مغربی بنگال کے مہیش تلہ پہلے دو گھنٹوں میں 15 فیصد سے زائد ووٹنگ ہوئی ۔ یہاں کئی بوتھوں پر ووٹنگ مشینوں کے خراب ہونے کی وجہ سے پولنگ تاخیر سے شروع ہوئی ۔ میگھالیہ میں صبح 11 بجے تک 20 فیصد سے زیادہ لوگوں نے ووٹ دیا۔ ان تمام نشستوں کے نتائج 31 مئی کو اعلان کیے جائیں گے۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

مراٹھواڑہ میں زوردار بارش –

اورنگ آباد : مراٹھواڑہ میں اورنگ آباد ، عثمان آباد،لاتور ،ہنگولی ، پربھنی اور ناندیڑ …

جواب دیں

%d bloggers like this: