سرورق / کھیل / ٹینس: ایڈمنڈ، مرٹنس پہلی بار سیمی فائنل میں-

ٹینس: ایڈمنڈ، مرٹنس پہلی بار سیمی فائنل میں-

میلبورن، 23 جنوری (یو این آئی) غیر سیڈ برطانیہ کے کائل ایڈمنڈ نے بہترین کارکردگی کے ساتھ تیسری سیڈ گریگور دمتروو کو الٹ پھیر کا شکار بنا کر 6۔4 ،3۔6 ،6۔3،6۔4 کی فتح کے ساتھ آسٹریلین اوپن ٹینس ٹورنمنٹ کے سیمی فائنل میں منگل کو داخلہ حاصل کر لیا۔جنوبی افریقہ میں پیدا ہوئے 23 سالہ ایڈمنڈ کیریئر میں پہلی بار گرینڈ سلیام کے سیمی فائنل میں داخل ہو گئے ہیں ۔ انہوں نے زبردست سرویس کیلئے مشہور بلغارین کھلاڑی کے خلاف کمال کے فورہینڈ کھیلے اور دمتروو کے 32کے مقابلے میں 46 ونرس لگاتے ہوئے راڈ لیور ایرینا میں اپنے کیریئر کی شاندار جیت درج کرلی۔ایڈمنڈ برطانیہ کے صرف چھٹے کھلاڑی بھی ہیں جنہوں نے موجودہ پیشہ ورانہ ٹینس دور میں گرینڈ سلیام کے سیمی فائنل میں داخلہ حاصل کیا ہے ۔یہ جیت ان کے لیے اس لئے بھی خاص ہے کیونکہ سابق نمبر ون اور پانچ بار کے آسٹریلین اوپن رنر اپ اینڈی مرے کے ہپ کی چوٹ کی وجہ سے ٹورنمنٹ سے ہٹنے کے بعد ایڈمنڈ مرد ڈرا میں اکیلے برطانوی کھلاڑی ہیں۔مرے نے بھی ایڈمنڈ کی اس جیت پر انہیں مبارک باد دی جو فی الحال گھر میں آرام کر رہے ہیں۔انہوں نے لکھا کہ حیرت انگیز اسکاٹ۔” سویڈن کے فریڈرک روسینگرین سے کوچنگ لینے والے غیر سیڈ برطانوی کھلاڑی نے تین گھنٹے تک جدوجہد کے بعد دمتروو کے خلاف جیت درج کی۔دنیا میں 49ویں درجہ بندی کے ایڈمنڈ کا اگلے دور میں اسپین کے رافیل نڈال اور مارن سلچ کے درمیان فاتح سے مقابلہ ہوگا۔اگر وہ فائنل تک پہنچتے ہیں تو سال 2006 کے بعد ایڈمنڈ، مرے کو پیچھے چھوڑ برطانیہ کے نمبر ایک کھلاڑی بھی بن سکتے ہیں۔مرد سنگلز کے سیمی فائنل میں جہاں ایڈمنڈ نے سب سے پہلے اپنا مقام پکا کیا وہیں خواتین کے سنگلز میں بھی غیر سیڈ کھلاڑی ایلس مرٹنس نے چوتھی سیڈ الینا سویتلانا کو الٹ پھیر کا شکار بنا کر 6۔4 ،6۔0 سے جیت درج کی اور پہلی کوشش میں میلبورن میں آخری چار کا ٹکٹ کٹا لیا۔یوکرائن کی سویتلانا کی اسی کے ساتھ مسلسل نو میچ جیتنے کی تال بھی ٹوٹ گئی اوربیلجیم کی کھلاڑی نے یکطرفہ انداز میں انہیں شکست دے دی۔دنیا کی 37 ویں نمبر کی کھلاڑی نے 26 ونرس لگائے اور بیک ہینڈ کے ساتھ73؍منٹ میں ہی اپنے کیریئر کے پہلے گرینڈ سلیام سیمی فائنل میں جگہ پکی کر لی۔22 سالہ کھلاڑی نے جیت کے ساتھ ہی کورٹ پر جم کر ناچتے ہوئے اپنی جیت کا جشن بھی منایا اور اپنے کوچ اور دوست رابی سیسینے کو اسٹینڈ میں ‘فلائنگ کس’ بھی دیا۔وہ سال 2012 میں کم کلسٹرس کے بعد میلبورن میں آخری چار میں پہنچی بیلجیم کی پہلی خاتون کھلاڑی ہیں اور اب کیرولن ووزنیاکی یا کارلا سواریز نوارو سے مقابلے میں اتریں گی-

Leave a comment

About saheem

Check Also

وزیر کھیل راٹھور سے ملے لکشے سین –

نئی دہلی، جونیئر ایشیائی بیڈمنٹن چمپئن شپ میں 53 سال کے طویل وقفے کے بعد …

جواب دیں

%d bloggers like this: