سرورق / خبریں / ٹرانسپورٹرس کی حالت کسانوں سے زیادہ بدتر 20جولائی سے ملک گیرغیرمعینہ ہڑتال یقینی:فیاض خان

ٹرانسپورٹرس کی حالت کسانوں سے زیادہ بدتر 20جولائی سے ملک گیرغیرمعینہ ہڑتال یقینی:فیاض خان

اورنگ آباد 🙁 یو این آئی) ملک میں ٹرانسپورٹرس کی حالت کسانوں سے زیادہ بدتر ہے ، ان کے مناسب اور جائز مطالبات پر حکومت نے کبھی سنجیدگی سے غور نہیں کیا۔اب تک حکومت کی جانب سے کتنے وعدے ہمیشہ جھوٹے ثابت ہوئے ہیں، اس بار حکومت کے کسی بھی وعدے اور یقین پر اعتبار نہیں کیا جائے گا، اب کرو یا مرو کی صورتحال ہے اس لئے جب تک حکومت ہمارے مطالبات کو منظور نہیں کرلیتی۔ 20جولائی سے شروع ہونے والی ہماری غیر معینہ مدت کی ملک گیر ہڑتال اس وقت تک ختم نہیں ہوگی۔اس طرح کی وضاحت آج یہاں اورنگ آباد گڈس ٹرانسپورٹ اسوسی ایشن کے صدر فیاض خان نے ایک پریس کانفرنس میں دی۔انھوں نے بتایاکہ ” آل انڈیا موٹر ٹرانسپورٹ کانگریس دہلی کی جانب سے حکومت کی تاناشاہی اور ٹرانسپورٹ شعبہ کو بربادی کے گڑھے میں پہنچانے والی پالیسیوں کے خلاف، اپنے مختلف مطالبات کی منظوری کے لئے ملک بھر میں، اورنگ آباد کے4.5 ہزار ٹرکوں کے بشمول 95 لاکھ ٹرک مالکان حصہ لیں گے ۔ 2 ماہ قبل حکومت کو نوٹس دیا گیا لیکن حکومت کی جانب سے ابھی تک کسی قسم کی کوئی پہل نہیں ہوئی۔اور نہ ہی کسی نمائندے نے کوئی گفتگو کی۔حکومت کے اس اڑیل رویہ کو دیکھتے ہوئے یہ ہڑتال اب یقینی ہے ۔ٹرانسپورٹ ہڑتال کو مکمل غیر سیاسی اور دیگر ہڑتالوں سے مختلف نیز مشقت طلب اور چوکسی و مستعدی کا متقاضی قرار دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بہت سوچ سمجھ کر اس ہڑتال کاٖ فیصلہ لیا گیا۔پہلے مرحلے پر تجارتی و دیگر نوعیت کے اشیاء کی حمل و نقل بند رہے گی،اس پر بھی اگر حکومت نے مطالبات منظور نہیں کئے تو پھر مجبوراً دیگر ضروریات زندگی اور لازمی نوعیت سے تعلق رکھنے والی اشیاء کی حمل و نقل بھی متاثر ہوگی۔پٹرول ڈیزل کی قیمتوں میں کمی ، ملکی سطح پر یکسانیت ، اور سہ ماہی طور پر قیمتوں کا تعین کرنے ، ٹرکوں کے لیے ٹول ناکوں کو ختم کرکے ایک ہی وقت میں ٹول ٹیکس وصول کرکے ’’ٹول فری بھارت ‘‘بنانے ، انکم ٹیکس محکمہ کی جانب سے لاگو کی گئی نئی شق 48 اے ای جس میں فی ٹرک سالانہ ٹیکس 48 ہزار سے بڑھاکر ڈھائی لاکھ تک کردیا گیاہے اسے منسوخ کرنے کے علاوہ انشورنس کے شعبہ میں تھرڈ پارٹی انشورنس کی رقم میں کئے گئے اضافہ کو رد کرنے اور ٹرک ڈرائیورں کی غیر قانونی ٹؤل ناکوں اور چیک پوسٹوں پر جبراً اور غیر قانونی لوٹ کھسوٹ بند کرنے کے مطالبات کے لیے یہ ہڑتال کی جارہی ہے ۔اس موقع پر اورنگ آباد گڈس ٹرانسپورٹ اسوسی ایشن کے دیگر عہدیداران ، اسد احمد، جئے کمار تھانوی، ایم۔جی دیشمکھ، راجندر مہیشوری، رویندر سینگھ کوٹیچا وغیرہ بھی موجودتھے ۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: