سرورق / کھیل / ورلڈ کپ فائنل:کروشیا کو شکست، فرانس 20سال بعد دوسری بار بنا عالمی چمپئن –

ورلڈ کپ فائنل:کروشیا کو شکست، فرانس 20سال بعد دوسری بار بنا عالمی چمپئن –

ٹیموں کی انعامی رقم
فرانس اور کروشیاکے درمیان کھیلے جانے والے فیفاورلڈ کپ جیتنے والی فرانس کی ٹیم کو انعامی رقم 38؍ملین ڈالر (260؍کروڑ روپئے) ملے گی۔ جبکہ رنرس اپ کروشیا کو 28؍ملین ڈالر انعامی رقم (192؍کروڑ روپئے) ملے گی۔ بلجیم جو تیسرے مقام پر آئی اسے انعامی رقم 24؍ملین ڈالر (164؍کروڑ روپئے) ملے گی۔ گروپ سطح پر خارج ہوئی ٹیموں کے لئے کم سے کم انعامی رقم 8؍ملین ڈالر (55؍کروڑ روپئے) فی کس ملے گی۔

ماسکو:روس کے دارالحکومت ماسکو میں فیفا عالمی کپ2018ء کے فائنل میں فرانس نے کروشیا کو 4-2سے شکست دے کر دوسری مرتبہ فٹبال کے عالمی چیمپیئن بننے کا اعزاز حاصل کر لیا ہے۔اس سے قبل فرانس نے20؍ سال پہلے 1998ء میں فٹبال کے عالمی فاتح بننے کا اعزاز حاصل کیا تھا۔اتوار کو کھیلے گئے فائنل میچ کے پہلے ہاف کی نسبت میچ کے دوسرے ہاف میں فرانس میں ٹیم نے میچ پر اپنی گرفت مضبوط رکھی اور4-2سے فتح اپنے نام کی۔پہلے ہاف کے اختتام پر فرانس کو ایک کے مقابلے میں دو گول کی برتری حاصل تھی۔ دوسرے ہاف میں پال پوگبا نے میچ کے59ویں منٹ میں ایک نہایت کی شاندار گول کر کے فرانس کی برتری 3-1کر دی۔ اس کے6؍ منٹ بعد ہی مپابے نے ایک اور گول کر کے اسکور4-1 کر دیا۔میچ کے 70 ویں منٹ میں مینڈزوکچ نے گول کر کے کروشیا کی امیدیں برقرار رکھیں تاہم کروشیا مزید کوئی گول کرنے میں ناکام رہا۔ پہلے ہاف میں میچ کے18 ویں منٹ میں کروشیا کے ماریو منڈزکچ کے اون گول کی بدولت فرانس کو برتری حاصل ہوگئی۔ فرانسیسی کھلاڑی انتوئن گریزمین کی فری کک سے بال مینڈزوکچ کے سر سے ٹکراتی ہوئی جال میں جا گری۔یہ ورلڈ کپ کے کسی فائنل میں ہونے والا پہلا اون گول تھا۔ تاہم یہ برتری زیادہ دیر قائم نہ رہ سکی اور ایوان پریسچ نے29ویں منٹ میں فری کک پر ہی ایک خوبصورت گول کر کے اسکور ایک، ایک سے برابر کر دیا۔پہلے ہاف کے 38ویں منٹ میں فرانس کو پینلٹی کک ملی جس پر انتوئن گریزمین نے فرانس کو ایک بار پھر سبقت دلا دی۔کروشیا کے ایوان پریسچ نے 29ویں منٹ میں فری کک پر ہی ایک خوبصورت گول کر کے ا سکور ایک، ایک سے برابر کر دیا تھا۔ کروشیا نے پہلی مرتبہ ورلڈ کپ کے فائنل کے لئے کوالیفائی کیا تھا جبکہ تیسری بار ورلڈ کپ فائنل کے لیے کوالیفائی کرنے والی فرانس کی ٹیم دوسری بار فٹبال کی عالمی فاتح بننے کے لئے میدان میں اتری تھی۔ کروشیا نے 1998ء میں آخری بار سیمی فائنل کھیلا تھا جہاں اسے فرانس کے ہاتھوں شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا اور اب 2018ء کے ورلڈ کپ کے فائنل میں فرانس نے ہی اسے شکست دی ہے۔ 2016ء میں فرانس کی ٹیم یورپیئن چمپئن شپ کے فائنل تک پہنچی تھی اور فائنل میں فیورٹ ہونے کے باوجود وہ پرتگال کو زیر کرنے میں ناکام رہی تھی۔ اس مرتبہ فرانس کی ٹیم نے اپنے عوام کو خوش کردیا ہے ۔جبکہ کروشیا کا اپنے اولین فائینل میں تاریخ بنانے کا خواب چکنا چور ہوگیا ہے۔ کروشیا کی آبادی تقریباً41؍ لاکھ افراد پر مشتمل ہے اور ورلڈ کپ کے فائنل کھیلنے والی آبادی کے لحاظ سے چھوٹے ترین ممالک میں شامل ہے۔فرانس کے صدر ایمینوئل میخواں اور کروشیا کی صدر بھی اس میچ کو دیکھنے اور اپنی ٹیم کو سپورٹ کرنے کے لیے ماسکو کے اسٹیڈیم میں موجودتھے۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

وزیر کھیل راٹھور سے ملے لکشے سین –

نئی دہلی، جونیئر ایشیائی بیڈمنٹن چمپئن شپ میں 53 سال کے طویل وقفے کے بعد …

جواب دیں

%d bloggers like this: