سرورق / خبریں / ‘من پسند شادی کے خلاف کھاپ پنچایت کارروائی نہیں کر سکتی’-

‘من پسند شادی کے خلاف کھاپ پنچایت کارروائی نہیں کر سکتی’-

نئی دہلی، 16 جنوری ( یواین آئی) سپریم کورٹ نے آج کہا کہ کوئی بالغ لڑکی یا لڑکا اپنی خواہش سے کسی بھی شخص سے شادی کر سکتی/سکتا ہے اور کھاپ پنچایت اس میں کوئی دخل نہیں دے سکتی۔

چیف جسٹس دیپک مشرا، جسٹس اے ایم كھانولكر اور جسٹس ڈی وائی چندرچوڑ کی بنچ نے محبت کی شادی کرنے والے نوجوان لڑکے اور لڑکیوں پر کھاپ پنچایتوں طرف سے کیے جانے والے مظالم پر لگام لگا پانے میں ناکام رہنے پر مرکزی حکومت کو پھٹکار بھی لگائی۔

جسٹس مشرا نے کہا’’کوئی بھی بالغ لڑکی یا لڑکااپنی پسند کے کسی بھی شخص سے شادی کر سکتی /سکتاہے-

Source:UNI

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: