سرورق / خبریں / ملک میں بھائی چارہ و یکجہتی کیلئے بنگارپیٹ میں ریالی-

ملک میں بھائی چارہ و یکجہتی کیلئے بنگارپیٹ میں ریالی-

بنگارپیٹ:30؍جنوری (احسان اللہ، نامہ نگار)بروز منگل بتاریخ 30؍جنوری کو دوپہر4بجے تا شام 5بجے تک بودی کوتے سرکل سے لے کر منسپل آفیس سرکل تک انسانی زنجیر بناکر بھائی چارگی اور یکجہتی کا مظاہر کیا گیا۔ اس ریالی میں تمام مذاہب کے لوگ مرد و خواتین شریک رہے۔ اس پروگرام کو کمیونسٹ پارٹی آف انڈیا (مارکس) نے آرگنائز کیا تھا۔ ریالی کے آخر میں تعلقہ آفیس کے سامنے ذمہ داروں نے لوگوں سے خطاب بھی کیا۔ سب سے پہلے شری سرینواس سی پی ایم لیڈر نے لوگوں نے اپیل کی کہ ہمارا کرناٹک ہزاروں سالوں سے امن کا گہوارہ رہا ہے اسے ہم کسی بھی حالت امن کو بگاڑنے نہیں دیں گے۔ ہم سب کو مل کر فرقہ پرستی کا مقابلہ کرنا ہوگا۔ کوئی بھی مذہب کسی پر ظلم کرنے کی تعلیم نہیں دیتا۔ ہم سب ہندوستانی ہیں چاہے وہ کسی بھی مذہب کا ماننے والا ہو۔ ان کے بعد بہت سارے دلتلیڈروں نے بھی خطاب کر کے امن کو قائم رکھنے کا عزم کا ارادہ کیا۔ اس موقع پر جماعت اسلامی ہند کے امیر مقامی جناب مبارک باغبان نے بھی بزبان کنڑا خطاب کر کے کہا کہ ہمارا ملک بہت سارے مذاہب کا ماننے والوں کا ملک ہے۔ اس کے باوجود ہمارا ملک ساری دنیا میں بھائی چارگی اور یکجہتی کیلئے مشہور ہے اس ملک کے مزاج کو برقرار رکھنا ہم سب کو ذمہ داری ہے۔ اگر امن میں خلل پڑگیا تھا ملک تباہ ہوجائے گا۔ ملک میں امن وہگا تو ملک ترقی کرے گا جس کا فائدہ سارے ہندوستانیوں کو ہوگا۔ اس کے بعد کمنیوسٹ پارٹی کی خواتین ذمہ دار نے بھی خطاب کیا اور عہد دلایا کہ ہم سب مل کر ملک کو فرقہ پرستی کے زیر سے بچائیں اور ملک کو امن کا گہوارہ بنائیں۔ اس ریالی میں دلت تنظیموں، مسلمانوں اور عیسائیوں نے بھی شرکت کی۔ آئی بی ایم کے ہائی اسکول و کالج کے طلبا نے بھی شرکت کی جس کی ذمہ داری جناب اقبال احمد سکریٹری آئی بی ایم نے سنبھالی، آخر میں دلت لیڈر شری ہنگوادی نارائنپا نے تمام لوگوں کا شکریہ ادا کیا-

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: