سرورق / بین اقوامی / روس کی اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی میٹنگ بلانے کی درخواست –

روس کی اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی میٹنگ بلانے کی درخواست –

اقوام متحدہ، روس نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل سے گزشتہ ماہ روسی ڈبل ایجنٹ سرگئی سكراپل اور اس کی بیٹی پر لندن میں ہوئے کیمیائی گیس حملے پر برطانیہ کے الزامات پر بحث کرنے کے لئے آج میٹنگ بلانے کی درخواست کی ہے۔ اقوام متحدہ میں روس کے سفیر ویسلی نبیزیا نے سابق جاسوس سرگئی اسکرپل اور ان کی بیٹی یولیا کے حوالہ سے برطانیہ کی حکومت نے روس کے خلاف جو اقدامات اٹھائے ہیں اس پر جمعرات کو اجلاس بلانے کی درخواست کی ہے۔نبیزیا کا کہنا تھا کہ کونسل کو روس کی پوزیشن واضح کرنے کے لیے جلد ہی خط مل جائے گا۔
خیال رہے کہ روس نے رواں سال 4 مارچ کو سابق جاسوس کو زہر دینے کے الزامات کو مسترد کردیا تھا۔بعد ازاں 14 مارچ کو برطانیہ کی درخواست پر اس معاملہ پر سلامتی کونسل کا ہنگامی اجلاس ہوا تھا جہاں سفارت کاروں کے درمیان سخت جملوں کا تبادلہ ہوا تھا جس کے بعد روس اور برطانوی حکومت کےدرمیان حالات کشیدہ ہوگئے تھے۔
برطانیہ کی وزیر اعظم تھریسامئے نے سابق جاسوس کو زہر دیے جانے کے بعد روس پر الزام عائد کیا تھا کہ ’’اس حوالہ سے کوئی وضاحت قابل عمل نہیں ہے‘‘۔دوسری جانب روس نے ابتدا میں اپنی بے گناہی کا دعویٰ کیا تھا۔بعد ازاں برطانیہ نے روس کے 23 سفارتی اہلکاروں کو جاسوسی کے الزام میں ملک بدر کرنے کا اعلان کردیا تھا۔برطانوی وزیراعظم تھریسامئے نے اراکین پارلیمنٹ کو آگاہ کیا تھا کہ روس کے 23 سفارتی اہلکاروں کو ایک ہفتے کے اندر واپس بھیج دیا جائے گا۔انہو ں نے روس کے ساتھ اعلیٰ سطحی تعلقات کو منقطع کرنے سمیت معاشی اور سفارتی اقدامات کا بھی اعلان کردیا تھا جبکہ روسی وزیر خارجہ سرگئی لاؤروف کے دورہ برطانیہ کو معطل کردیا گیا تھا۔
برطانوی وزیراعظم نے اپنے اعلان میں کہا تھا کہ برطانیہ کے وزرا اور شاہی خاندان کے افراد روس میں ہونے والے فٹ بال ورلڈ کپ میں بھی شرکت نہیں کریں گے۔تھریسا مئے نے کہا تھا کہ انسانی حقوق کی پامالی کرنے والے کے خلاف پابندی کو مزید سخت کردی جائے گی۔ روس نے جوابی اقدامات کرتے ہوئے برطانیہ کے بھی 23 سفارتکاروں کو ملک سے نکلنے کا حکم دیا تھا۔ روس کا کہنا تھا کہ وہ باہمی ثقافتی تعلقات کے لیے ملک میں کام کرنے والی بین الاقوامی تنظیم برٹش کونسل کی سرگرمیاں بھی روک دے گا۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: