سرورق / کھیل / حسب توقع ہیری کین کو گولڈن بوٹ ایوارڈ تبوت کو رٹیئس کو گولڈ گلوز،اسپین فیفا فیر پلے ٹیم۔ لوکا موڈرچ کو گولڈن بال

حسب توقع ہیری کین کو گولڈن بوٹ ایوارڈ تبوت کو رٹیئس کو گولڈ گلوز،اسپین فیفا فیر پلے ٹیم۔ لوکا موڈرچ کو گولڈن بال

ماسکو، (یو این آئی) انگلینڈ کی ٹیم فیفا عالمی کپ کے سیمی فائنل میں ناکام رہی لیکن اس کے کپتان اور اسٹرائیکر ہیری کین کو ٹورنمنٹ میں سب سے زیادہ6 گول داغنے پرگولڈن بوٹ ایوارڈ سے نوازا گیا۔ بلجیئم کے گول کیپر تبوت کورٹیئس کو ’گولڈن گلوز‘ کا انعام ملا جبکہ اسپین کو فیفا فیر پلے ٹرافی سے نوازا گیا۔ فائنل میں فرانس سے شکست کھا چکی کروشیا کے کپتان لوکا موڈرچ کو گولڈن بال اور فرانس کے کلین ایم باپے کو امیجنگ پلیئر آف دا ٹورنمنٹ کا ایوارڈ دیا گیا ہے ۔گولڈن بوٹ پا ئے انگلش کپتان کین نے عالمی کپ میں سب سے زیادہ6 گول داغے ۔ انہوں نے 2 گول تیونیشیا کے خلاف کئے تھے جس میں ایک انجری ٹائم میں کیا گیا تھا جبکہ اپنے بقیہ 4 گول میں سے3 گول پنالٹی سے کئے تھے ۔بلجیئم کے گول کیپر کورٹیئس نے ٹورنمنٹ میں3 مرتبہ اپنی ٹیم کے خلاف حریف ٹیم کو گول کرنے نہیں دیا اور3 کلین شیٹ رکھے ۔ عالمی کپ میں اس کامیابی کے بعد ان کا انگلش پریمیئر کلب چیلسی کی پوزیشن اور زیادہ مضبوط ہوگئی ہے۔21ویں عالمی کپ میں عظیم پیلے کے بعد سب سے کم عمر نوجوان عالمی کپ گول اسکورر بننے والے فاتح فرانس کے ایم باپے نے ٹورنمنٹ میں 4 گول کئے ۔ پیلے نے 1958ء میں 17سال 249دن کی عمر میں عالمی کپ میں گول کیا تھا اور وہ آج بھی فیفا عالمی کپ میں گول کرنے والے سب سے کم عمر اسکورر ہیں۔ ایم باپے ان کے بعد دوسرے نمبر پر ہیں۔رنراپ کروشیا کے 32سالہ موڈرچ ہمیشہ اپنی ٹیم کے مڈفیلڈ کی جان رہے اور انہوں نے ٹیم کو پہلی مرتبہ عالمی کپ فائنل میں پہنچانے میں اہم کردار نبھایا۔ گولڈن بال پا ئے موڈرچ نے ٹورنمنٹ میں2 گول داغے ۔ انہوں نے ٹورنمنٹ کے7 میچوں میں 70کلومیٹر تک میدان میں دوڑ لگائی جو کسی بھی دیگرکھلاڑی سے سب سے زیادہ ہے ۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

وزیر کھیل راٹھور سے ملے لکشے سین –

نئی دہلی، جونیئر ایشیائی بیڈمنٹن چمپئن شپ میں 53 سال کے طویل وقفے کے بعد …

جواب دیں

%d bloggers like this: