سرورق / خبریں / جنوبی کشمیر میں 3 جنگجویانہ حملے، کھنہ بل میں گرینیڈ دھماکے سے 4 سی آر پی ایف اہلکاروں سمیت 6 افراد زخمی-

جنوبی کشمیر میں 3 جنگجویانہ حملے، کھنہ بل میں گرینیڈ دھماکے سے 4 سی آر پی ایف اہلکاروں سمیت 6 افراد زخمی-

سری نگر ، جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ کے کھنہ بل میں جمعہ کو سہ پہر کے وقت جنگجوؤں کی طرف سے سینٹرل ریزرو پولیس فورس (سی آر پی ایف) اور ریاستی پولیس کی مشترکہ پارٹی کو نشانہ بناکر کئے گئے گرینیڈ حملے میں چار سی آر پی ایف اہلکاروں، ایک پولیس اہلکار اور ایک عام شہری سمیت 6 افراد زخمی ہوگئے۔
تاہم ریاستی پولیس کے مطابق حملے میں زخمی ہونے والے سبھی افراد کی حالت خطرے سے باہر ہے۔ جنگجوؤں کی طرف سے اس سے قبل جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ میں پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی (پی ڈی پی ) ممبر اسمبلی کی رہائش گاہ کو یو بی جی ایل گرینیڈ سے نشانہ بنانے کی ناکام کوشش کی گئی جبکہ قصبہ پلوامہ میں سی آر پی ایف کی ایک بنکر گاڑی پر فائرنگ کی گئی۔ تاہم ان حملوں میں کسی جانی نقصان یا کسی کے زخمی ہونے کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔
سرکاری ذرائع نے بتایا کہ جنگجوؤں نے جمعہ کو سہ پہر کے وقت قصبہ اننت ناگ کے کھنہ بل میں سی آر پی ایف کی 140 بٹالین اور ریاستی پولیس کے اہلکاروں پر مشتمل ایک مشترکہ پارٹی کو نشانہ بناکر گرینیڈ پھینکا۔ انہوں نے بتایا کہ اس گرینیڈ کے پھٹنے کے باعث چار سی آر پی ایف اہلکاروں، ایک پولیس اہلکار اور ایک شہری سمیت 6 افراد زخمی ہوئے۔ زخمیوں کو علاج و معالجہ کے لئے ضلع اسپتال اننت ناگ منتقل کیا گیا ہے۔
ایک پولیس ترجمان نے بتایا کہ زخمیوں کی حالت خطرے سے باہر بتائی جارہی ہے۔ زخمیوں سی آر پی ایف اہلکاروں کی شناخت رویندر سنگھ، ویر سنگھ، ونود کمار اور محمد سراج کی حیثیت سے کی گئی ہے۔ زخمی پولیس اہلکار کی شناخت عبدالمجید ساکنہ لارکی پورہ اننت ناگ اور زخمی شہری کی شناخت ترال کے رہنے والے عبدالرشید کی حیثیت سے کی گئی ہے۔
ذرائع نے بتایا کہ اگرچہ حملے کے فوراً بعد علاقہ میں تلاشی آپریشن چلایا گیا ، تاہم حملہ آور فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے۔ اس سے قبل جنگجوؤں کی طرف سے ضلع پلوامہ کے ترال میں پی ڈی پی ممبر اسمبلی مشتاق شاہ کی رہائش گاہ کو یو بی جی ایل گرینیڈ سے نشانہ بنانے کی کوشش کی گئی۔
سرکاری ذرائع نے بتایا ’جنگجوؤں کی طرف سے پی ڈی پی ایم ایل اے کی رہائش گاہ کو نشانہ بناکر یو بی جی ایل گرینیڈ داغا گیا۔ یہ گرینیڈ ہدف تک پہنچنے سے پہلے ہی مکان کے صحن میں پھٹ گیا۔ اس میں کسی جانی نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ہے‘۔
پلوامہ میں اس سے قبل جمعہ کی علی الصبح جنگجوؤں کی طرف سے سی آر پی ایف کی ایک بنکر گاڑی پر فائرنگ کی گئی۔ تاہم فائرنگ کے اس واقعہ میں کسی جانی نقصان یا کسی کے زخمی ہونے کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔
سرکاری ذرائع نے بتایا کہ جنگجوؤں نے جمعہ کی علی الصبح قصبہ پلوامہ میں عیدگاہ کی طرف جارہی 183 بٹالین سی آر پی ایف کی بنکر گاڑی پر فائرنگ کی۔ انہوں نے بتایا ’جنگجوؤں نے گاڑی کو نشانہ بناکر گولیاں چلائیں اور موقع سے فرار ہوگئے‘۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ فائرنگ کے فوراً بعد حملہ آروں کو تلاش کرنے کے لئے علاقہ میں تلاشی آپریشن شروع کیا گیا۔
ایک رپورٹ کے مطابق تلاشی آپریشن کے دوران سیکورٹی فورسز کو علاقہ میں تین بستے برآمد ہوئے ہیں جن سے مبینہ طور پر آئی ای ڈی بنانے کے لئے استعمال ہونے والا ساز وسامان برآمد ہوا ہے۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

بھونگیر حادثہ۔تلنگانہ کے وزیراعلی کا اظہار افسوس

حیدرآبادتلنگانہ کے وزیراعلی کے چندرشیکھر راو نے ضلع یادادری بھونگیر میں پیش آئے سڑک حادثہ …

جواب دیں

%d bloggers like this: