سرورق / خبریں / تالابوں پر ایس ٹی پی یونٹس کی تعمیر کا منصوبہ ۔۔ رضاکار مطمئن نہیں

تالابوں پر ایس ٹی پی یونٹس کی تعمیر کا منصوبہ ۔۔ رضاکار مطمئن نہیں

بنگلورو۔بنگلورو آبی سربراہی اور فضلات کی نکاسی بورڈ (بی ڈبلیو ایس ایس بی) کی طرف سے شہر کے پانچ تالابوں پر گندے پانی کی صفائی کے آلات (ایس ٹی پی یونٹس ) کی تعمیر کے منصوبہ کو اب تحریک حاصل ہو چکی ہے ۔ واضح رہے کہ یہ آلات آگرا، سارکی، چکا بیگور، کے آر پورم اور ہلی ماؤ تالابوں میں گندے پانے کے داخل ہونے کو روکنے کے لئے نصب کئے جا رہے ہیں اور امید کی جا رہی ہے کہ یہ اگلے دیڑھ سال کے اندر ہی کام کرنا شروع کر دیں گے۔ان تمام ایس ٹی پی یونٹس سے یہ بھی امید کی جا رہی ہے کہ کل 75 ایم ایل ڈی گندے پانی کی صفائی انجام پائے گی۔بی ڈبلیو ایس ایس بی کے انتظامی زون تین کے اضافی چیف انجینئر نتیا نندا کمار نے اس بات کی تصدیق کی ہے کہ ان مقامات پر گندے پانی کی صفائی کے آلات کا تعمیراتی کام جاری ہے۔افسران لکا کہنا ہے کہ جہاں چکا بیگور کا ایس ٹی پی اسی سال کے اواخر تک مکمل ہو جانے کی امید ہے اور اس کے فوری بعد ہولی ماؤ کا ایس ٹی پی بھی تیار ہو جائے گا البتہ دوسرے تمام مقامات پر ایس ٹی پی یونٹس کی تعمیر سال 2019 کے اختتام تک مکمل ہو سکتی ہے۔آگرا جھیل پر تعمیر ہونے والے ایس ٹی پی یونٹ میں روزانہ 35 ایم ایل ڈی گندے پانی کی صفائی کی صلاحیت موجود ہے ، جبکہ سارکی اور چکا بیگور کے ایس ٹی پی یونٹس فی کس پانچ ایم ایل ڈی گندے پانی کی صفائی کر سکیں گے ، ان کے علاوہ کے آر پورم کے ایس ٹی پی کے ذریعہ بیس ایم ایل ڈی پانی کی صفائی انجام پائے گی اور ہولی ماؤ پر دس ایم ایل ڈی گندے پانی کی صفائی کا کام انجام پائے گا۔شہری رضاکار شیتیج ارس کو البتہ اس بات کی امید نہیں ہے کہ ان ایس ٹی پی یونٹس کی تعمیر کی وجہ سے ان تالابوں میں گندے پانی کا رساؤ یا بہاؤ رک جائے گا ، سابقہ تجربات کو اگر دیکھا جائے تو شہر میں پہلے سے تعمیر کردہ کئی ایس ٹی پی یونٹ کام کرنا چھوڑ دئے ہیں اور وہ بیکار پڑے ہوئے ہیں ، ایک مثال دورے کیرے تالاب ، جو کمارا سوامی لے آؤٹ میں واقع ہے اس پر تعمیر کردہ ایس ٹی پی یونٹ کی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ حکام کو چاہئے کہ وہ بہتر ٹیکنالوجی کو استعمال کرتے ہوئے کم خرچ والے مزید طریقوں کو اپنانے کی کوشش کریں جس کے ذریعہ ان تالابوں میں گندے پانی کے بہاؤ کو روکا جا سکیں اور اس طرح ان تالابوں کی بھی حفاظت ہو اور شہر کو بہتر پانی کی فراہمی کا بھی کوئی نظم بن سکے۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: