سرورق / خبریں / بے انتہاء ہوس کی وجہ سے عدلیہ، انتظامیہ اور سیاست کرپٹ اصولوں کی پاسداری کرنے جسٹس سنتوش ہیگڈے کی طلبہ کو نصیحت –

بے انتہاء ہوس کی وجہ سے عدلیہ، انتظامیہ اور سیاست کرپٹ اصولوں کی پاسداری کرنے جسٹس سنتوش ہیگڈے کی طلبہ کو نصیحت –

ٹمکور: آج سماج حرص و ہوس میں ڈوبا ہوا ہے، اقتدار کی بے انتہاء ہوس کی وجہ سے عدلیہ، سماج، انتظامیہ اور سیاست نے اچھے اصولوں کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار جسٹس سنتوش ہیگڈے نے ٹمکور میں آریہ بھارتی پالی ٹیکنک کے طلباء سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اصل نعرہ تو یہ تھا کہ عوام سے عوام کی بھلائی کے لئے اقتدار ہوگا۔ یہ نعرہ بدل کر ’’سیاست سے سیاست دونوں کا بھلا ہونا چاہئے‘‘ ہوگیا ہے۔ دس بیس سال پہلے کرپشن لاکھوں روپئے کا ہوا کرتا تھا۔ اب یہی کرپشن ہزاروں کروڑوں روپئے کاہوگیا ہے۔ بے شمار گھوٹالے اجالے میں آتے ہیں لیکن پھر یکایک دور کہیں اندھیرے میں ڈوب کر ختم ہوجاتے ہیں۔ یا ختم کردئے جاتے ہیں۔ اب زمانہ ایسا آگیا ہے کہ جیل کی ہوا کھا کر آنے والوں کی عزت افزائی ہورہی ہے، گلپوشی ہورہی ہے۔ جلسے جلوس ان کے استقبال میں ہوگئے ہیں، ایسا خراب زمانہ پہلے کبھی نہیں تھا۔ انہوں نے افسوس ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ اس کیلئے ہمارا موجودہ سماج اور موجودہ ماحول ہی ذمہ دار ہے۔ ان خرابیوں کو دور کرنے اور ختم کرنے کیلئے نوجوانوں کو سچائی کا جھنڈا ٹھانے آگے آنا چاہئے۔ نوجوانوں کی طاقت وہ سرچشمہ ہے جو موجودہ ماحول کو بدل سکتا ہے۔ نوجوانوں کو انہوں نے آواز دی کہ ہمارے بزرگوں نے جوراہ دکھلائی ہے۔ سچائی کی راہ اس پر چلیں۔ رشوت خوری اور سماج کی دوسری گندگیوں کا خاتمہ کریں، رشوت خوروں کا سماجی بائیکاٹ کریں۔ امن وشانتی اور انصاف سے بھر پور سماج کی تعمیر ہونی چاہئے۔ ہر ایک کیلئے ضروری ہے کہ وہ انسانیت پسند اصولوں کو اپنائے جنہیں ان کا ضمیر اچھا جانتا ہے۔ انسان امیر بن سکتاہے لیکن کمانے کی راہ انصاف پر مبنی ہونی چاہئے۔ اجلاس سے بنگلور کے ’’اسرو‘‘ کے خلائی سائنسدان بی کے وینکٹ رامو نے بھی خطاب کیا اور کہا کہ طلباء علم کے میدان کو انتہائی دلچسپی سے اپنائیں اور ترقی کی راہ پر چلیں۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

بی ایس این ایل صارفین کو بہتر خدمت فراہم کرے۔ منی اپا

کولار۔ ٹیلی کمیونکیشن ، کولار ضلع صلاح بورڈ کے صدر ورکن پارلیمان کے ایچ منی …

جواب دیں

%d bloggers like this: