سرورق / خبریں / بی پی ایل کارڈ رکھنے والوں کیلئے مفت علاج کی سہولت –

بی پی ایل کارڈ رکھنے والوں کیلئے مفت علاج کی سہولت –

وجیاپورہ: بی پی ایل کارڈ رکھنے والوں کو ہیلتھ سینٹروں میں مفت علاج کی سہولت فراہم کی جائیگی۔ یہ بات میڈیکل آفیسر امیش نے کہی۔ انہوں نے یہاں فلور گرام پنچایت کے احاطے میں مفت ہیلتھ اسکیم کے بارے میں عوامی بیداری پیدا کرنے کے پروگرام میں شرکت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کی طرف سے حال ہی میں آروگیہ سرکشا کارڈ فراہم کئے گئے ہیں۔ اس کی تقسیم کی کارروائی عارضی طور پر روک دی گئی ہے۔ آئندہ دو تین ماہ میں پھر سے کارڈز تقسیم کئے جائیں گے۔آروگیہ سرکشا کارڈز کی تقسیم عمل میں آنے تک بی پی ایل کارڈ ہولڈرس کو پرائمری ہیلتھ سینٹروں میں اور تعلقہ و ضلعی اسپتالوں میں مفت علاج کیا جائے گا۔ بی پی ایل کارڈ نہ رکھنے والوں کیلئے 25فیصد خرچ مریض کی طرف سے کرنا ہوگا۔ اس سہولت کے بارے میں مقامی گرام پنچایت کی سطح پر عوام کو معلوم کرایاجائے گا۔ گرام پنچایت ڈیولپمنٹ آفیسر مہیش نے کہا کہ حکومت کی طرف سے منظور ہونے والے منصوبوں کو عوام تک پہنچانے کیلئے سرکاری افسروں، غیر سرکاری تنظیموں اور عوامی نمائندوں کو متحد ہوکر کام کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ عوام کی بھی ذمہ داری ہے کہ سرکاری منصوبوں کے بارے میں جانکاری حاصل کریں اور اس کا بھر پور فائدہ اٹھائیں۔ مہیش نے کہا کہ عوام اپنی صحت کا خاص خیال رکھیں اور بیماری کے ابتدائی مرحلے میں ہی نزدیکی ڈاکٹر سے رابطہ کر کے علاج کرائیں۔ حکومت کی طرف سے مریضوں کے علاج کیلئے کئی منصوبے جاری کئے گئے ہیں۔ اس موقع پر سکریٹری رمیش، محکمہ صحت کے عملہ منی راجو، نلور گرام پنچایت کے سابق صدر سرینواس اور دیگر موجود تھے۔

وجیاپورہ: بی پی ایل کارڈ رکھنے والوں کو ہیلتھ سینٹروں میں مفت علاج کی سہولت فراہم کی جائیگی۔ یہ بات میڈیکل آفیسر امیش نے کہی۔ انہوں نے یہاں فلور گرام پنچایت کے احاطے میں مفت ہیلتھ اسکیم کے بارے میں عوامی بیداری پیدا کرنے کے پروگرام میں شرکت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کی طرف سے حال ہی میں آروگیہ سرکشا کارڈ فراہم کئے گئے ہیں۔ اس کی تقسیم کی کارروائی عارضی طور پر روک دی گئی ہے۔ آئندہ دو تین ماہ میں پھر سے کارڈز تقسیم کئے جائیں گے۔آروگیہ سرکشا کارڈز کی تقسیم عمل میں آنے تک بی پی ایل کارڈ ہولڈرس کو پرائمری ہیلتھ سینٹروں میں اور تعلقہ و ضلعی اسپتالوں میں مفت علاج کیا جائے گا۔ بی پی ایل کارڈ نہ رکھنے والوں کیلئے 25فیصد خرچ مریض کی طرف سے کرنا ہوگا۔ اس سہولت کے بارے میں مقامی گرام پنچایت کی سطح پر عوام کو معلوم کرایاجائے گا۔ گرام پنچایت ڈیولپمنٹ آفیسر مہیش نے کہا کہ حکومت کی طرف سے منظور ہونے والے منصوبوں کو عوام تک پہنچانے کیلئے سرکاری افسروں، غیر سرکاری تنظیموں اور عوامی نمائندوں کو متحد ہوکر کام کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ عوام کی بھی ذمہ داری ہے کہ سرکاری منصوبوں کے بارے میں جانکاری حاصل کریں اور اس کا بھر پور فائدہ اٹھائیں۔ مہیش نے کہا کہ عوام اپنی صحت کا خاص خیال رکھیں اور بیماری کے ابتدائی مرحلے میں ہی نزدیکی ڈاکٹر سے رابطہ کر کے علاج کرائیں۔ حکومت کی طرف سے مریضوں کے علاج کیلئے کئی منصوبے جاری کئے گئے ہیں۔ اس موقع پر سکریٹری رمیش، محکمہ صحت کے عملہ منی راجو، نلور گرام پنچایت کے سابق صدر سرینواس اور دیگر موجود تھے۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: