سرورق / خبریں / بنگلورو شہر کو چکاچوند کرنے والا ’’ایشیا جیولس فیئر2018ء‘‘ 6تا 8؍اپریل شہرمیں زیورات کی نمائش، اکشیا ترمیتا کے موقع پر-

بنگلورو شہر کو چکاچوند کرنے والا ’’ایشیا جیولس فیئر2018ء‘‘ 6تا 8؍اپریل شہرمیں زیورات کی نمائش، اکشیا ترمیتا کے موقع پر-

بنگلورو۔ جنوبی ایشیا کی سب سے شاندار زیورات کی نمائش ’’ایشیا جیولس فیئر2018‘‘ کی 13ویں ایڈیشن بنگلور شہر میں 6تا 8؍اپریل مقرر ہے۔ زیورات کا یہ عظیم فیئر کا کانریڈ بنگلور ہوٹل میں انعقاد عمل میں لایا جارہاہے۔ کانریڈ بنگلور ہوٹل السور (نزد1م، ایم جی روڈ مال) میں واقع ہے۔ یہ نمائش صبح 10:30؍بجے تا شام 8؍بجے ہوگی۔ اس خصوصی شو میں پہلی مرتبہ ایسے عالمی شان کے زیورات کی نمائش ہوگی جو پہلے کبھی نہیں دیکھے گئے تھے۔ اس میں ایسے منتخب زیورات کو پیش کیا جارہاہے جو ہندوستان بھر سے جمع کئے گئے ہیں۔ جنوبی ہند کی مشہور اداکارہ انگنارائے 6؍اپریل کو دوپہر 12؍بجے کانریڈ بنگلور ہوٹل میں اس شاندار نمائش کا افتتاح کریں گی۔ ایشیا جیولس فیئر 2018ء میں دیگر اقسام کے علاوہ اعلیٰ برانڈ کے ڈائمنڈ اور سونے کے زیورات پیش کئے جارہے ہیں۔ اس موقع پر بہترین گولڈ جیولری، ڈائمنڈ کے زیورات، پلاٹینم زیورات، روایتی زیورات، شادی کے زیورات، قیمتی پتھر سے بنے زیورات، کندن، جاداؤ اور پولکی زیورات بھی نمائش کے لئے رکھے جائیں گے۔
نمائش کی خصوصیات: اس یادگار نمائش میں شوبھا شرنگار جیولرس کی خصوصی پیش کش ’’دی فیمینامس انڈیا کا تاج2017‘‘ بھی رکھا جائے گا۔ اس تاج میں 8000؍پرکشش ہیرے 60شاندار روبی جڑے ہوئے ہیں۔ اسے موجودہ مس ورلڈ منوش چلرنے پہنا تھا۔ اس نمائش میں بین الاقوامی زیورات کے ڈیزائن ہندوستان کے چوٹی کے برانڈ سے لئے گئے ہیں جیسے ملبارگولڈ اینڈ ڈائمنڈس، جویالکاس، دنیاکا سب سے زیادہ پسندیدہ جیولر پی سی چندرا جیولرس، شوبھاشرنگار جیولری۔ ممبئی، نکھار جیولس اور راجیولس، ڈائمنڈ منترا، ابیراجیولرس کولکتہ، انانیا جیولس، گولڈ کیرٹ۔ دہلی، ڈیزائن سورس اور ارچنا اگروال جیولس، اورا از سرانا جیولرس۔ دہلی، زیوا جیولری۔ ممبئی، کرماجیولس، رینا جمس اینڈ کے جیولس دہلی ہڈرون اس نمائش سے متعلق مزید جانکاری کے لئے کال کریں۔ 9620463920 پر رابطہ کرسکتے ہیں۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: