سرورق / کرناٹک / بزم گلزار ادب چن پٹن کاطرحی مشاعرہ

بزم گلزار ادب چن پٹن کاطرحی مشاعرہ

چن پٹن۔ (راست ) بروز ہفتہ5؍مئی کلا نگر چن پٹن میں بزم گلزار ادب چن پٹن کا طرحی مشاعرہ منعقد ہواجس کی صدارت ڈاکٹر ستار خان زئی نے کی۔مہمان خصوصی عبدالکریم انجم ؔ رہے ۔ صدارتی تاثرات پیش کرتے ہوئے ڈاکٹرستار خان زئی نے کہا کہ ادبی محفلوں کا انعقاد اردو ادب اور اس کی بقاء کے لئے بہت ضروری ہے ۔آج کے اس مصروف ترین دور میں اردو محفلوں کے انعقاد کے لئے انہوں نے سید برہان الدین ذوقؔ معتمد بزم کو مبارکباد پیش کی اور کہا کہ سامعین کو جمع کرنا اورشعراء کی خدمت کرنا ذوقؔ صاحب کی زندگی کا خاصہ رہا۔ انہوں نے چن پٹن کے شاعر نظام علی خان دانش کی رحلت پر تعزیت پیش کرتے ہوئے کہا کہ مرحوم بہت ہی خلیق اور ملنسار طبیعت کے مالک تھے۔ مشاعروں میں اپنی مصروفیات کے باوجود بلاناغہ شریک ہوا کرتے تھے۔انہوں نے مرحوم کے حق میں دعائے مغفرت کی۔ استقبالیہ پیش کرتے ہوئے سید برہان الدین ذوق نے کہا کہ گلزار ادب کی سرگرمیاں کچھ عرصہ سے رک سی گئی تھیں لیکن اب دوبارہ چل پڑی ہیں ۔انہوں نے کہا کہ گلزا ر ادب میں آنے والا ہر شاعر اس کا رکن ہے ۔ انہوں نظام علی خان دانش مرحوم اور شاعرہ زہرہ بانو کے انتقال پر تعزیتی کلمات پیش کرتے ہوئے کہا زہرہ بانو ہمیشہ اپنا کلام بھیج دیا کرتی تھیں ۔ مرحومہ اکثر نعتیہ و منقبتیکلام پیش کرتی رہی ہیں۔ دونوں کے حق میں دعائے مغفرت کی گئی۔سید کاشف اللہ اسحاقی کی قرأت سے آغاز ہوا۔ ممتاز علی خان، نثار مہدی شاہد، عبدالرشید منصوری ، سید کاشف اللہ ، ابراہیم شفیع اللہ اور صاحب جان صدام نے بارگاہِ نبوتؐ و بارگاہ ولایت میں منظوم نذرانہ عقیدت پیش کیا۔ مصرعہ طرح’’شیرازۂ حیات یہاں تک بکھر گیا‘‘ پر شعراء نے اپنی تخلیقات پیش کیں جن میں عبدالکریم انجم، سید برہان الدین ذوق، جاوید بیگ جاوید، سیدمحمود یداللٰہی محمود، نثار مہدی شاہدشامل ہیں۔ بزم کا اگلا مشاعرہ عید ملن ہوگا جس کے لئے مصرعہ طرح ہے’’ خار دامن سے الجھ کر گل بداماں ہوگئے ‘‘ ( قافیہ: بداماں، ردیف: ہوگئے ) ۔نظامت اور شکریہ کے فرائض سید برہان الدین ذوق نے انجام دئے ۔


Leave a comment

About saheem

Check Also

کے آر پورم۔۔۔ گاڑی سواروں کیلئے خطرناک چوراہا –

بنگلور،  بنگلور شہر کے خستہ حال راستوں اور ٹریفک کی بد انتظامی کی وجہ سے …

جواب دیں

%d bloggers like this: