سرورق / خبریں / اکھلیش نےسرکاری بنگلہ خالی کرنے کا عمل شروع کیا

اکھلیش نےسرکاری بنگلہ خالی کرنے کا عمل شروع کیا

لکھنؤ، سپریم کورٹ کے سابق وزرائے اعلی کو الاٹ بنگلوں کو خالی کرنے کے حکم کے بعد سماج وادی پارٹی (ایس پی) کے صدر اور اترپردیش کے سابق وزیراعلی اکھلیش یادو نے چار وکرم ادتیہ روڈ پر واقع رہائش گاہ خالی کرنے کا عمل شروع کردیا ہے۔ ذرائع نے آج یہاں بتایا کہ ایس پی کے صدر کے والد ملائم سنگھ یادو بھی بنگلہ خالی کرنے پر غور و خوض کررہے ہیں۔انہیں اکھلیش یادو کے بنگلے کے نزدیک ہی سابق وزیراعلی کے طورپر بنگلہ الاٹ کیا گیا تھا۔ انہوں نے بتایا کہ مسٹر یادو کا بنگلہ آج شام تک خالی ہوجائے گا۔
سپریم کورٹ کے حکم کے بعد تمام سابق وزرائے اعلی کو بنگلہ خالی کرنے کے لئے ریاستی املاک محکمہ نے یکم جون تک کا وقت دیا ہے۔ اکھلیش یادو اور ملائم سنگھ یادو کو ریاستی املاک محکمہ کا حکم 17مئی کو ملا تھا۔ مسٹر اکھیلیش یادو اور ملائم سنگھ یادو نے بنگلہ خالی کرنے کے لئے دو برس کا وقت مانگا تھا اور اس کے لئے سپریم کورٹ میں ایک عرضی بھی دائر کی تھی۔
مرکزی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ اور راجستھان کے گورنر کلیان سنگھ نے سابق وزرائے اعلی کے طورپر الاٹ رہائش گاہ کو سپریم کورٹ کے حکم کے بعد خالی کردیا ہے۔ بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) کی صدر مایاوتی نے دعوی کیا ہے کہ انہوں نے پہلے ہی چھ ، شاستری روڈ بنگلہ دیش خالی کردیا ہے۔ یہ رہائش گاہ انہیں سابق وزیراعلی کے طورپر الاٹ کی گئی تھی ۔ وہیں دوسری طرف ریاستی املاک محکمہ نے کہاہے کہ محترمہ مایاوتی کو سابق وزیراعلی کے طورپر 13۔اے مال ایونیو الاٹ کیا گیا تھا۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: