سرورق / خبریں / انتخابات کے نتائج مایوس کن۔ صرف 7 مسلم امیدوار کامیاب نوٹ کے بدلے ووٹ اور مسلم علاقوں میں پولنگ کا کم فیصد ،مسلم امیدواروں کی ہار کی وج –

انتخابات کے نتائج مایوس کن۔ صرف 7 مسلم امیدوار کامیاب نوٹ کے بدلے ووٹ اور مسلم علاقوں میں پولنگ کا کم فیصد ،مسلم امیدواروں کی ہار کی وج –

بنگلورو،ریاستی اسمبلی انتخابات کے نتائج توقع کے برخلاف ظاہر ہوئے ،پولنگ کے بعد ایگزٹ پول کے مطابق کسی بھی واحد پارٹی کو اکثریت نہیں ملی ہے ۔ پچھلی اسمبلی میں مسلم اراکین اسمبلی کی تعداد جہاں گیارہ تھی وہ گھٹ کر صرف7ہوگئی ۔ اس مرتبہ کانگریس کی ٹکٹ پر صرف7مسلم امیدوار کامیاب ہوئے ہیں ۔حسب توقع جناب آر ۔روشن بیگ شیواجی نگر حلقے سے بی جے پی امیدوار کٹا سبرامنیا نائیڈو کو15040ووٹوں کی اکثریت سے ہرایا ہے ۔ اس طرح شانتی نگر حلقہ سے این اے حارث نے بی جے پی کے کے واسودیو مورتی کو18205ووٹوں کے فرق سے شکست دی ہے جبکہ نرسمہاراجہ حلقہ سے تنویر سیٹھ نے بی جے پی کے ایس ستیش کو 18,127 ووٹوں کے فرق سے شکست دی ہے ۔ حا ل ہی میں جے ڈی ایس چھوڑ کر کانگریس میں شامل ہونے والے بی زیڈ ضمیر احمد خان نے بی جے پی کے ایم لکشمی نارائن کو 33137ووٹو ں کے بھاری فرق سے ہرایا ہے ۔ کلبرگی نارتھ حلقہ سے سابق ریاستی وزیر قمر الاسلام صاحب مرحوم کی بیوہ کنیز فاطمہ نے بی جے پی کے چندر کانت پاٹل کو 5940ووٹوں کے فرق سے شکست دی ہے۔منگلور حلقہ سے سابق وزیر یوٹی قادر نے بی جے پی کے سنتوش کمار رائے بویسیورو کو 19739ووٹوں کے فرق سے ہرایا ہے ۔ بیدر حلقہ سے رحیم خان نے بی جے پی کے سوریہ کانت ناگمر پلی کو 10,245ووٹوں کے فرق سے ہرایا۔ اس مرتبہ کانگریس نے 17مسلم امیدواروں کو ٹکٹ دیا تھا جن میں صرف7کامیاب رہے اور دس مسلم امیدوار چناؤ ہار گئے ۔ ہارنے والے امیدواروں کی تفصیل اس طرح سے ہے۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: