سرورق / بین اقوامی / امریکہ اور اسرائیل عالم اسلام کے مشترکہ دشمن : خطیب جمعہ مسجد اقصیٰ کی صیہونی قبضہ سے آزادی کی حمایت اور اسرائیلی مظالم کے خلاف پوری دنیا سراپا احتجاج-

امریکہ اور اسرائیل عالم اسلام کے مشترکہ دشمن : خطیب جمعہ مسجد اقصیٰ کی صیہونی قبضہ سے آزادی کی حمایت اور اسرائیلی مظالم کے خلاف پوری دنیا سراپا احتجاج-

تہران – قبلہ اول کی صیہونی قبضہ سے آزادی کی حمایت میں اور اسرائیلی مظالم کے خلاف جمعہ کے روز پوری دنیا میں عالمی یوم القدس منایاگیا۔اس احتجاج کا مقصد اسرائیلی بربریت اور دنیا بھر میں ہونے والے مظالم کے خلاف نفرت کا اظہار کرنا ہے۔بانی انقلاب اسلامی حضرت امام خمینی(رح) کے حکم کے مطابق عالمی یوم القدس ہر سال مظلوموں کی حمایت کے دن کے طور پر منایا جاتا ہے اور دنیا کا ہر ذی شعور، ظلم کو انسانی تقاضوں کی توہین سمجھتا ہے۔فلسطین کے مسلمانوں کے خلاف اسرائیل کے بڑھتے ہوئے مظالم، عالم اسلام کے وقار پر حملہ ہے۔ مسلمانوں کے ازلی دشمن اور قبلہ اول پر قابض اسرائیل کی نابودی کے لئے امت مسلمہ کو متحد ہونے کی ضرورت ہے تاہم یہ امر افسوسناک ہے کہ اسلامی ممالک کے ہر اتحاد سے صرف مسلمانوں کو ہی نقصان پہنچا۔قبلہ اول کی آزادی مسلمانوں پر قرض ہے۔ عالم اسلام کو تفرقوں میں الجھا کر اسرائیل اور اسلام دشمن طاقتوں کی معاونت کی جا رہی ہے۔قبلہ اول پر اسرائیلی یلغار کے پیچھے امریکہ، برطانیہ اور اس کے اتحادی ممالک کی سازشیں کارفرما ہیں۔ استعماری قوتیں مسلمانوں کے وحدت کو پارہ پارہ کرکے اپنے مذموم مقاصد کی تکمیل میں مصروف ہیں۔مظلوم فلسطینوں کی حمایت میں عالمی یوم القدس کے روز گھروں سے نکل کر احتجاج میں شامل ہونا ہر شخص کا شرعی فریضہ ہے۔دوسری جانب تہران کے خطیب جمعہ آیت اللہ سید احمد خاتمی نے امریکہ اور صیہونی حکومت کو عالم اسلام کا مشترکہ دشمن قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران اپنی میزائل توانائی اور میزائلوں کی رینج میں مسلسل اضافہ کرتا رہے گا۔تہران کے خطیب جمعہ آیت اللہ سید احمد خاتمی کا کہنا تھا کہ امریکہ اور صیہونی حکومت عالم اسلام کے مشترکہ دشمن ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دشمن، مسئلہ فلسطین کو طاق نسیاں میں ڈالنے یا اسے ایک عرب مسئلے میں تبدیل کرنے کی سازشوں میں مصرف ہے لیکن اسرائیل آج ایسی ذلت سے دوچار ہو گیا کہ صہیونی حکومت کا وزیر اعظم بوکھلاہٹ کے عالم میں دنیا کے مختلف ملکوں کے پھیرے لگا رہا ہے۔ تہران کے خطیب جمعہ نے کہا کہ عالمی یوم قدس صرف اسرائیل اور امریکہ کے خلاف ہی نہیں ہے بلکہ خطے کی رجعت پسند حکومت کے بھی خلاف ہے جنہوں نے امریکہ، اسرائیل اور سعودی عرب پر مشتمل ناپاک مثلث قائم کر رکھا ہے۔ آیت اللہ سید احمد خاتمی نے کہا کہ آج خطے کی رجعت پسند حکومتیں اسرائیل کے ساتھ تعلقات کے قیام کے لیے دوڑ لگا رہی ہیں لیکن انہیں یاد رکھنا چاہیے کہ اس کا نتیجہ خود ان کے سقوط کی صورت میں برآمد ہو گا۔ تہران کے خطیب جمعہ نے ولایت فقیہ کے اصول، اسرائیل سے نفرت اور ملک کی میزائل طاقت کو قومی اتحاد کے تین بنیادی عناصر قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ میزائل طاقت، علاقائی اثرورسوخ اور ایٹمی سرگرمیاں ایران کی طاقت کے تین عناصر ہیں تاہم ایٹمی سرگرمیاں پرامن ہیں کیونکہ اسلامی تعلیمات ہمیں ایٹمی ٹیکنالوجی کو فوجی مقاصد کے لئے استعمال کرنے کی اجازت نہیں دیتیں۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

بھونگیر حادثہ۔تلنگانہ کے وزیراعلی کا اظہار افسوس

حیدرآبادتلنگانہ کے وزیراعلی کے چندرشیکھر راو نے ضلع یادادری بھونگیر میں پیش آئے سڑک حادثہ …

جواب دیں

%d bloggers like this: