سرورق / خبریں / اسمبلی انتخابات: ناگالینڈ میں 10 بجے تک 21 فیصد پولنگ، وزیر اعظم کی عوام سے ووٹ کرنے کی اپیل-

اسمبلی انتخابات: ناگالینڈ میں 10 بجے تک 21 فیصد پولنگ، وزیر اعظم کی عوام سے ووٹ کرنے کی اپیل-

کوہیما، ناگالینڈ میں 13 ویں اسمبلی کے لئے ہورہی پولنگ میں آج صبح 10 بجے تک 21 فیصد ووٹروں نے اپنے حق رائے دہی کا استعمال کیا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کے سات بجے پولنگ شروع ہوئی تھی۔ حالانکہ شروع میں ووٹنگ کی رفتار سست تھی لیکن بعد میں پولنگ مراکز پر طویل لائنیں نظر آنے لگیں اور الیکشن افسران ووٹروں کو سنبھالنے میں مصروف نظر آئے۔سرکاری طور پر ابھی کہیں سے کسی طرح کے تشدد کے واقعہ کی کوئی رپورٹ نہیں ہے۔ انہوں نے بتایا کہ موکوک چنگ میں گولیاں سے چھلنی، ایک شخص کی موت ہوجانے نیز مون ضلع میں پولنگ مرکز کے باہر کچھ بدمعاشوں کے جانب سے کروڈ بم پھینکے جانے کے اطلاعات ملی ہیں۔ حالانکہ ان واقعات کی سرکاری طور پر تصدیق نہیں کی گئی ہے۔
ذرائع کے مطابق کچھ انتہائی حساس پولنگ مراکز پر تشدد کے خدشے سے انکار نہیں کیا جاسکتا لیکن انتظامیہ نے ایسے کسی واقعہ کو ٹالنے کے لئے سکیورٹی کے پختہ انتظام کئے ہیں۔

سردی کی وجہ سے ووٹنگ کے آغاز میں ووٹروں کی تعداد کم نظر آ رہی ہے۔ ڈان باسکواسکوائر میں ایک پولنگ اسٹیشن کے باہر ووٹروں کو پرچياں بانٹ رہے ایک کانگریسی کارکن نے کہا’’دوپہر کے بعد ووٹ کرنے والوں کی تعداد بڑھے گی‘‘۔ میگھالیہ میں 340 پولنگ اسٹیشنوں كو انتہائی حساس اور 580 پولنگ اسٹیشنوں کو حساس قرار دیا گیا ہے۔ بہت سے پولنگ مراکز پر کیمرے نصب کئے گئے ہیں۔ تمام پولنگ مراکز میں جسمانی طور پر معذور وں کی سہولت کے لئے خاص ریمپ بنایا گیا ہے۔ الیکشن حکام کے مطابق تمام پولنگ مراکز میں وي وي پیٹ کا استعمال کیا جارہاہے۔وزیر اعظم نریندر مودی نے میگھالیہ اور ناگالینڈ کے عوام سے آج ہو رہے اسمبلی انتخابات میں بھاری تعداد میں ووٹ ڈالنے کی اپیل کی۔ مسٹر مودی نے ایک ٹویٹ میں کہا، “میں میگھالیہ اور ناگالینڈ کے عوام سے آج ہو رہے اسمبلی انتخابات میں بھاری تعداد میں ووٹ ڈالنے کی اپیل کرتا ہوں.” غور طلب ہے کہ ساٹھ ساٹھ رکنی اسمبلی انتخابات کے لئے دونوں شمال مشرقی ریاستوں میں آج پولنگ ہو رہی ہے۔ووٹوں کی گنتی تین مارچ کو ہوگی۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: