سرورق / خبریں / اترپردیش: آندھی طوفان سے زبردست تباہی ، 40 افراد کی موت ، فصلوں کو شدید نقصان

اترپردیش: آندھی طوفان سے زبردست تباہی ، 40 افراد کی موت ، فصلوں کو شدید نقصان

لکھنو، اترپردیش میں کل رات آئے زبردست آندھی طوفان کی زد میں آکر کم از کم 40لوگوں کی موت ہوگئی۔ اس کا سب سے زیادہ اثر آگرہ ڈویزن میں رہا جہاں 36لوگوں کی موت ہوگئی۔ آندھی طوفان کے ساتھ گرے اولوں نے برج علاقہ میں تباہی مچا دی۔ 132کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے آئے طوفان نے پندرہ منٹ تک جم کر تباہی مچائی۔ اس کی زد میں آکر آگرہ ڈویزن کے اضلاع میں 36 لوگوں کی موت ہوگئی۔
آگرہ کے ڈویزنل کمشنر رام موہن راو نے یو این آئی کو بتایا کہ آندھی طوفان کی زد میں آکر کم از کم 36لوگوں کی موت ہوگئی۔ کچھ لوگ زخمی ہیں۔ زخمیوں کو مختلف اسپتالوں میں داخل کرایا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ڈویزن میں ہوئے نقصان کا اندازہ لگایا جارہا ہے۔ سب سے پہلی ترجیح زخمیوں کا علاج ہے۔ آندھی طوفان کی زد میں آکر مویشیوں کے بھی مارے جانے کی اطلاع ہے۔
ضلع مجسٹریٹ گورو دیال نے بتایا کہ مرنے والوں کی بڑی تعداد کے پیش نظرپوسٹ مارٹم ہاوس میں مجسٹریٹ کی ڈیوٹی لگائی گئی۔ ڈاکٹروں کی خصوصی ٹیم قائم کی گئی ہے۔ ہنگامہ کی اندیشہ کے پیش نظر سیکورٹی انتظامات بھی کئے گئے ہیں۔ ایمرجنسی خدمات اور ضلع اسپتال کے ڈاکٹروں کو الرٹ کردیا گیا ہے۔
سہارنپور سے موصول رپورٹ کے مطابق کل شام آئی آندھی طوفان کی زد میں آکر کئی مقامات پر درخت گر گئے اور مکانات کے ٹن شیڈ اور چھپر اڑ گئے۔ بہاری گڑھ میں درخت گرنے سے 9سالہ بچی سمیت دو لوگوں کی موت ہوگئی۔ آم کی فصل کو زبردست نقصان پہنچا ہے۔ مظفر نگر میں بجلی سپلائی میں رخنہ پڑا ہے۔ گیہوں کی فصل کو بھی نقصان ہوا ہے۔ بلند شہر میں بھی فصلوں کو نقصان پہنچاہے۔ بجنور میں درخت گرنے سے جام لگ گیا۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: