سرورق / خبریں / آزاد رکن اسمبلی ناگیندر راھل گاندھی کے پروگرام کے دوران کانگریس میں شامل ہوں گے-

آزاد رکن اسمبلی ناگیندر راھل گاندھی کے پروگرام کے دوران کانگریس میں شامل ہوں گے-

بنگلور( پی ین ین ):۔ وزیر اعلیٰ سدارامیا اور پردیش کانگریس کے صدر ڈاکٹر جی پرمیشور نے بی جے پی کو کمزور کرنے میں کامیاب ہوگئے ہیں اوربلاری ضلع کوڑلیگی اسمبلی حلقہ کے آزاد اُمیدوار اے ناگیندر کو کانگریس میں شامل کرانے کے لئے راضی کرالیا ہے اور ناگیندر 29جنوری کو ہوسپیٹ میں انعقاد کانگریس کے صدر راھل گاندھی کے دورے کے موقعہ پر ایک پروگرام کے ذریعہ انہیں پارٹی میں شامل کیا جائے گا ۔ناگیندر کو پارٹی میں شامل کرنے کے ذریعہ بلاری کے رکن پارلیمان شری رامو لو کو ایک زور دار جھٹکا دیا ہے۔ناگیندر کئی سالوں سے شری رامولو کے قریبی ساتھی ہیں اور ایک ساتھ سیاست میں قدم رکھا تھا اور ناگیندر نے کئی سالوں تک بی جے پی کیلئے کام کرنے او راُمیدواروں کی حمایت میں انتخابی مہم چلانے کے باوجود انہیں ٹکٹ دینے کا جھوٹا وعدہ کیا جاتا رہا ۔ا سلئے ناگیندر نے ناراض ہوکر کوڑلیگی حلقہسے آزاد اُمیدوار کے طور پر انتخابات کا سامنا کیا اور زبردست کامیابی حاصل کی۔ سدارامیا۔پرمیشور کے علاوہ وزیر برائے توانائی ڈی کے شیوا کمار اور پردیش کانگریس کے کار گذار صدر دنیش گنڈوراؤ نے ناگیندر کو راضی کرالیا ہے اور اس کی اطلاع راھل گاندھی کو بھی دی گئی ہے۔راھل گاندھی نے ناگیندر کو پارٹی میں شمولیت کی منظوری دی ہے ۔ناگیندر کو کوڑلیگی ۔بلاری رورل اور کامپلی اسمبلی حلقہ کی ذمہ داری دینے کا فیصلہ لیاگیا ہے۔ ناگیندر کا تعلق آندھرا پردیش سے ہے اور انہوں نے بلاری میں تعلیم حاصل کی۔وہ سابق وزیر دیواکربابو کے ہمراہ رہے اور یہاں بھی دھوکہ اور نا انصافی ہونے پر ریڈی برادرس کے ساتھ اپنی پہچان بنائی اور شری رامولو کے قریبی دوست بن گئے ۔وہ گذشتہ اسمبلی انتخابات میں بی جے پی کے ٹکٹ پر کامیابی حاصل کی اور رکن اسمبلی بنے ۔اس کے بعد ناگیندر شری رامولو کی بی ایس آر پارٹی میں شامل ہوگئے اور اس پارٹی کے ٹکٹ پر زبردست کامیابی حاصل کی۔ناگیندر پر غیر قانونی طریقہ سے خام لوھا اسمگنگ کرنے کے الزام میں سی بی آئی کے ہاتھوں گرفتار ہوکر سوا سا ل تک پرپنااگراہا رجیل میں گذارے تھے اور اب ضمانت پر رہا ہوئے ہیں اور وہ لوک آیوکتہ کے خصوصی جانچ ٹیم ( ایس آئی ٹی) سے بھی پوچھ تاچھ کا سامنا کررہے ہیں۔اس کے باوجود ناگیندر کوکانگریس پارٹی میں کس لئے لیا گیا یہ بات سمجھ سے باہر ہے۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

کروناندھی کی حالت بگڑی –

چنئی (ایجنسیز) تملناڈو کے سابق وزیر اعلیٰ اور ڈی ایم کے کے سربراہ ایم کروناندھی …

جواب دیں

%d bloggers like this: