سرورق / کھیل / آئی پی ایل : فتح حاصل کرنےمیدان میں اترے گی ممبئی انڈینس –

آئی پی ایل : فتح حاصل کرنےمیدان میں اترے گی ممبئی انڈینس –

حیدرآباد، اپنے پہلے مقابلے میں چینئی سپرکنگس سے ہارنے کے بعد گزشتہ چیمپئن ممبئی انڈینس کی ٹیم آج سن رائزرس حیدرآباد کے گھر میں ہونے والی آئی پی ایل -11 کے میچ میں فتح حاصل کرنے کے لئے میدان میں اترے گی. وانکھڑے اسٹیڈیم میں ممبئی انڈینس کی کارکردگی ناقص رہی اور اسے چنئی کے ہاتھوں ایک گیند باقی اور ایک وکٹ سے شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ دوسری طرف حیدرآباد نے اپنے گھریلو میدان میں راجستھان رائلس کو یک طرفہ انداز میں 25گیندیں اور نو وکٹ سے ہرادیا۔
ہندستان کے محدود اووروں کے نائب کپتان روہت شرما کی قیادت والی ممبئی ٹیم کے پاس چینئی کے خلاف جیت حاصل کرنے کا اچھا موقع تھا لیکن ڈیون براوو کے حملوں کے آگے ممبئی انڈینس اچھے کھیل کا مظاہرہ نہیں کرپائی۔ ممبئی کو اب حیدرآباد کے خلاف کھیلتے وقت گزشتہ غلطیوں کو دہرانے سے بچنا ہوگا۔روہت جانتے ہیں کہ حیدرآباد کی ٹیم اپنے گھر میں خاصی مضبوط ہے اور جس طرح اس نے راجستھان کو شکست دی ہے وہ دوسری ٹیموں کے لئے باعث خطرہ ہوسکتی ہے۔
روہت کا فارم میں واپسی کرنا بہت ضروری ہے ۔ پہلے میچ میں وہ صرف 15رن ہی بناپائے تھے۔ انہوں نے بنگلہ دیش میں کھیلی گئی ندهاس ٹرافی کے دو میچوں میں 89 اور 56 رن بنائے تھے اگر ان نصف سنچری کو الگ کر دیا جائے توگزشتہ کچھ عرصہ سے روہت کی کارکردگی میں تسلسل کی کمی رہی ہے۔ انہیں اپنی ٹیم کو دوبارہ ٹریک پر لانے کے لیے ٹاپ آرڈر میں اچھے کھیل کا مظاہرہ کرنا ہوگا۔
ممبئی کے پاس ٹاپ آرڈر میں اسٹار بلے باز نہیں ہیں اور ٹیم اشان کشن، سوریہ كمار یادو، ہاردک پانڈیا اور كرنال پانڈیا کے سہارے بڑا اسکور نہیں بنا سکتی۔ اس کے لیے روہت کو کم از کم میدان میں 15 اوور کھیلنا ہوگا تبھی ٹیم چیلنجنگ اسکور بنا سکے گی۔ دوسری جانب حیدرآباد کے پاس ٹاپ آرڈر میں اچھے کھلاڑی موجود ہیں جو بڑا اسکور بھی بنا سکتے ہیں اور ہدف کا پیچھا بھی کرسکتے ہیں۔شکھر دھون، نیوزی لینڈ کے کپتان کین ولیمسن اور منیش پانڈے ایسے بلے باز ہیں جو کسی بھی گیندبازکو کھیل سکتے ہیں۔
شکھرنے پہلے مقابلہ میں 57 گیندوں پر ناٹ آؤٹ 78 رنوں کی فاتح اننگزکھیلی اور مین آف دی میچ بھی رہے تھے۔
حیدرآباد کے پاس بھونیشور کمار، شکیب الحسن اور دنیا کے نمبر ایک ٹوئنٹی 20 گیندباز افغانستان کے راشد خان کے طور پر انتہائی مضبوط گیندباز موجود ہیں جن سےمقابلہ کرنے کے لئے روہت اینڈ کمپنی کو بہت محنت کرنی پڑے گی۔
آئی پی ایل -11 میں اب تک حیدرآباد راجستھان کے میچوں کو چھوڑ کر باقی مقابلے ٹھیک ہی رہے ہیں اور امید ہے کہ ممبئی ۔ حیدرآباد کا مقابلہ بھی کافی سخت رہے گا۔ محدود اوورز میں ہندستان کے لئے روہت اور شکھر کی جوڑی کھیلتی ہے اور اس مقابلے میں دونوں ایک دوسرے کے اپوزٹ کھڑے ہو کر چیلنجز پیش کریں گے۔روہت اور شکھر کے مقابلے میں جو جیتے گا اس کی ٹیم کا پلڑا بھاری ہو جائے گا۔

Leave a comment

About saheem

Check Also

وزیر کھیل راٹھور سے ملے لکشے سین –

نئی دہلی، جونیئر ایشیائی بیڈمنٹن چمپئن شپ میں 53 سال کے طویل وقفے کے بعد …

جواب دیں

%d bloggers like this: